پی ایس ایل : لاہورقلندرزنے کوئٹہ گلیڈی ایٹرزکو17رنزسے شکست دیدی -
The news is by your side.

Advertisement

پی ایس ایل : لاہورقلندرزنے کوئٹہ گلیڈی ایٹرزکو17رنزسے شکست دیدی

 شارجہ: پاکستان سپرلیگ کے چھبسویں میچ میں لاہور قلندرز کی ٹیم نے کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کو 17 رنز سے ہرادیا، کوئٹہ گلیڈی ایٹرز مقررہ بیس اوورز میں 6 وکٹ پر 169رنز بنا سکی۔

تفصیلات کے مطابق شارجہ میں پی ایس ایل کے 26ویں میچ میں لاہور قلندر نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے کوئٹہ کو 187رنز کا ہدف دیا تھا، گلیڈی ایٹرز کی کپتانی سرفراز احمد اور قلندرز کی قیادت برینڈن میکولم نے کی۔

گلیڈی ایٹرز کے کپتان کی دعوت پر لاہور قلندرز نے پہلے بیٹنگ کا آغاز کیا تو ڈیوچ اور فخر زمان اوپننگ کے لیے میدان میں آئے، میکولم الیون کو بہتر آغاز ملا اور اُن کا پہلا کھلاڑی 43 کے مجموعی اسکور پر پویلین لوٹا بعد ازاں آغا سلمان 53، برینڈن میکولم 73 اور فخر زمان 141 کے مجموعی اسکور پر پویلین لوٹے۔

فخر زمان نے شاندار بیٹنگ کی اور صرف 6 رنز کے فرق سے وہ اپنی اور پی ایس ایل کے تیسرے ایڈیشن کی پہلی سنچری نہ کرسکے اور 50 گیندوں پر 94 کے انفرادی اسکور پر پویلین لوٹے، انہوں نے 6 چھکوں اور 9 چوکوں کی مدد سے ٹیم کے مجموعی اسکور پر 186 تک پہنچایا۔ کوئٹہ کی جانب سے انور علی، راحت علی، میر حمزہ اور حسن خان نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔

 ،جواب میں کوئٹہ گلیڈی ایٹرزمقررہ اوورز میں 6 وکٹ کے نقصان پر169رنزبناسکی، جیسن رائے 36، روسو نے 42 رنز بنائے۔ یاسر شاہ اور سنیل نرائن نے 2،2 وکٹیں حاصل کیں۔

کوئٹہ گلیڈی ایٹرز اننگز

بارہویں اوور میں انور علی اور چودہویں اوور میں کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کے بلے باز روسو 42 کے انفرادی اسکور پر آؤٹ ہوئے، 15 اوورز میں اسکور 123/6 تک پہنچا۔

چھٹے اوور کی دوسری اور ساتویں اوور کی آخری گیند پر گلیڈی ایٹرز کے دو کھلاڑی آؤٹ ہوئے، شین واٹسن 52 اور جیس روئے 56 کے مجموعی اسکور پر آؤٹ ہوئے، نئے آنے والے بیٹسمین کیوین پیٹرسن اور رمیز راجہ جونیئر بھی نویں اور دسویں اوور میں پویلین لوٹے، دس اوور کے اختتام پر ٹیم کا مجموعی اسکور چار وکٹوں کے نقصان پر 76 تک پہنچا۔

ہدف کے تعاقب میں گلیڈی ایٹرز نے بیٹنگ کا آغاز کیا تو جیسن روئے اور شین واٹسن کریز پر آئے، چار چھکوں کی مدد سے پانچویں اوور کے اختتام پر ٹیم کا مجموعی اسکور 52 تک پہنچا۔

لاہور قلندرز اننگز

لاہور قلندرز کی ٹیم نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے مقررہ 20 اوورز میں 186 رنز اسکور کیے اور گلیڈی ایٹرز کو جیت کے لیے 187 کا ہدف دیا، فخز زمان 94 رنز بنا کر نمایاں بلے باز رہے جبکہ گلریز صدف 42 گیندوں پر ناٹ آؤٹ رہے۔

برینڈن میکولم گیارہویں اوور میں حسان خان کی گیند کو نہ سمجھ سکے اور اسٹمپ ہوکر پویلین روانہ ہوئے، پندرہ اوور اختتام پر ٹیم کا مجموعی اسکور تین وکٹوں کے نقصان پر 140 تک پہنچا، فخر زمان 49 گیندوں پر 94 رن بناکر کریز پر موجود ہیں۔

چھٹے اوور کی دوسری اور ساتویں اوور کی چوتھی گیند پر قلندرز کے دو کھلاڑی ڈیوچ، آغاز سلمان آؤٹ ہوئے، دسویں اوور کے اختتام پر ٹیم کا مجموعی اسکور دو وکٹوں کے نقصان پر 73 تک پہنچا۔

لاہور قلندرز کی جانب سے اننگز کا آغاز ڈیوچ اور فخر زمان نے کیا، دونوں اوپنرز نے اچھے کھیل کا مظاہرہ کرتے ہوئے ٹیم کا مجموعی اسکور پانچویں اوور کے اختتام پر 42 تک پہنچایا۔

ٹاس کے بعد گفتگو کرتے ہوئے سرفراز احمد کا کہنا تھاکہ ہم پہلے لاہور قلندرز کو بیٹنگ کی دعوت دے رہے ہیں، جیت کے تسلسل کو آج کے میچ میں بھی جاری رکھنے کی کوشش کریں گے۔

قلندرز کے کپتان کا کہنا تھا کہ گزشتہ میچ میں فتح کے بعد کھلاڑیوں کے حوصلے بلند ہیں، کوشش کریں گے کہ فتح حاصل کر کے ایونٹ کا اچھا اختتام کریں۔

کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے ٹیم میں دو تبدیلیاں کی ہیں، اسد شفیق کی جگہ جیسن روئے اور نئے کھلاڑی امیر حمزہ کو پلیئنگ الیون کا حصہ بنایا گیا جبکہ قلندرز کی ٹیم میں کوئی تبدیلی نہیں ہوئی۔

اسکواڈ

واضح رہے کہ اسلام آباد یونائیٹڈ اور کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کی ٹیمیں پی ایس ایل کے کوالیفائنگ راؤنڈ تک رسائی حاصل کرچکی ہیں اور لاہور قلندرز کی ٹیم ایونٹ سے باہر ہوچکی ہے۔

خیال رہے کہ لاہور قلندرز کی ٹیم نے اب تک 8 میچز کھیلے جن میں سے صرف 2 میں فتح جبکہ بقیہ 6 میں انہیں شکست کا سامنا رہا، آج کے بعد میکولم الیون کو ایک میچ اور کھیلنا باقی ہے۔ پی ایس ایل کے تیسرے ایڈیشن میں تمام ٹیموں کو 10 ، 10 میچز کھیلنے ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے  کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں