سانحہ بلدیہ فیکٹری: رحمان بھولا کا ضمنی چالان میں‌اعتراف جرم -
The news is by your side.

Advertisement

سانحہ بلدیہ فیکٹری: رحمان بھولا کا ضمنی چالان میں‌اعتراف جرم

کراچی :انسدادہستگردی کی عدالت مین سانحہ بلدیہ فیکٹری کیس سماعت عدالت میں پولیس کی جانب سے مقدمے کا ضمنی چالان پیش کر دیا گیا، عدالت نے ضمنی چالان منظور کرتے ہوئے ایم کیو ایم کے رہنما روف صدیقی کو شامل تفتیش کرنے کا حکم دیتے ہوئے سماعت 14 فروری تک ملتوی کردی.

تفصیلات کے مطابق انسدادہشتگردی کی عدالت میں سانحہ بلدیہ کیس کی سماعت ہوئی عدالت میں سانحہ بلدیہ کیس کا ضمنی چالان پیش کیا گیا، چالان میں بتایا گیا کہ حماد صدیقی کی گرفتاری کے لئے انٹرپول سے رابطے کے لئے مراسلہ لکھ دیا گیا ہے، ملزم رحمان بھولا نے اعتراف جرم کیا ہے رحمان بھولا نے حماد صدیقی کے کہنے پر فیکٹری میں اگ لگائی.

کمرہ عدالت میں جب رحمان بھولا کو پیش کیا گیا تو جج ملزم کی حالت دیکھ کر حیران رہ گئے، انہوں کہا کہ رحمان بھولا کو پیش کیا جائے تفتشی افسر نے جواب دیتے ہوئے کہا کہ یہ ہی رحمان بھولا ہے، جس پر عدالت نے استفار کیا ، کیا یہ ہی رحمان بھولا ہے ؟ جس پر تفتشی افسر کا کہنا تھا کہ جی ! یہ ہی رحمان بھولا ہے ، اس کے سر اور دڑاھی کے بال بڑھ گئے ہیں ، اس لئے شناخت میں مشکل درپیش ہو رہی ہے.

بعد ازاں عدالت نے ایم کیو ایم کے رہنما روف صدیقی کو مقدمے میں شامل تفتیش کرنے کا حکم دیتے ہوئے، سماعت 14 فروری تک ملتوی کردی.

سماعت کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے رحمان بھولا کا کہنا تھا کہ میں نے ایسا کوئی بیان نہیں دیا اور نہ ہی حماد صدیقی نے مجھے اگ لگانے کو کہا میرے بیٹے کی وڈیو بنا کر مجھے دکھائی گئی تاکہ میں مجبور ہو جاوں اور منشا کے مطابق ایسا بیان بازی کروں مگر حقیقت یہ ہے کہ میں بے قصور ہوں، میں نے کوئی جرم نہیں کیا ہے ، رحمان بھولا نے کہا کہ مجھ پر پریشر ہے اور میرے گھر والوں پر دباو ڈالا جا رہا ہے.

واضح رہے سانحہ بلدیہ کیس میں رحمان بھولا اور زبیر چرچہ کو بھی پیش کیا گیا تھا.

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں