The news is by your side.

Advertisement

سندھ میں احتساب ہوسکتا ہے توپنجاب میں کیوں نہیں، راجہ پرویز اشرف

گوجرانوالہ : پیپلز پارٹی کے رہنما اور سابق وزیراعظم راجہ پرویز اشرف نے کہا ہے کہ اگر سندھ میں احتساب ہوسکتا ہے تو پنجاب کو سینہ تان کر کہنا چاہئیے کہ آؤ ہمارا بھی احتساب کرو۔

دودھ میں دھلے ہوئے افراد نیب سے کیوں پریشان ہیں، سندھ میں احتساب ہوسکتا ہے توپنجاب میں کیوں نہیں ،یہ بات انہوں نے گوجرانوالہ میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہی۔

راجہ پرویز اشرف نے کہا کہ ہم نے بے قصورہوکر بھی عدالتوں کا سامنا کیا، پیپلز پارٹی نے سندھ میں رینجرزاور نیب سے مکمل تعاون کیا، پنجاب حکومت کو بھی چاہیے کہ نیب کے ساتھ تعاون کرے۔

انہوں نے کہا کہ اگر سندھ میں احتساب ہوسکتا ہے تو پنجاب کو سینہ تان کر کہنا چاہئیے کہ آؤ ہمارا احتساب کرو، پیپلز پارٹی کے وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی نے بھی نیب کا سامنا کیا تھا لیکن ہم نے شور نہیں مچایا تھا تو اب نیب میں کسی بزنس مین کو دو گھنٹے بٹھانے پرحکومت کا شور مچانا درست نہیں۔

سابق وزیراعظم کا کہنا تھا کہ احتساب ہر شخص کا ہونا چاہئیے دودھ میں دھلے ہوئے افراد نیب سے کیوں پریشان ہیں؟

پٹھان کوٹ کے واقعہ کی ایف آئی آر کے اندراج پر راجہ پرویز اشرف نے کہا کہ ایف آئی اے درج کرنا حکومت پاکستان کی کمزوری ہے۔ پاکستان کا پٹھان کوٹ واقعہ سے کوئی تعلق نہیں ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں