وہ چیزیں جن سے روزہ ٹوٹتا اور مکروہ ہوجاتا ہے -
The news is by your side.

Advertisement

وہ چیزیں جن سے روزہ ٹوٹتا اور مکروہ ہوجاتا ہے

رمضان المبارک رحمتوں بھرا مہینہ ہے۔ اس ماہ مبارک میں ہر مسلمان رحمتوں کو سمیٹنے اور رضائے الہٰی کے حصول کے لئے روزے رکھتا ہے۔

وہ چیزیں جن سے روزہ ٹوٹ جاتا ہے

 

کان اور ناک میں دوا ڈالنا۔

قصداً منہ بھر قے کرنا، البتہ طبیعت کی خرابی سے خود بخود قے آجائے تو اس سے روزہ نہیں ٹوٹے گا۔

وضو کرتے وقت یانہاتے وقت اگر غلطی سے پانی حلق میں چلا گیا تو روزہ ٹوٹ جائے گا۔

کوئی ایسی چیز نگل جانا کھائی نہیں جاتی ، جیسے لکڑی، لوہا، کچا گیہوں کا دانہ وغیرہ۔

کسی خوشبودار چیز، سگریٹ اور حقے کا دھواں ناک یا حلق میں پہنچانا۔

بھول کر کھا پی لینا پھر اس خیال سے کہ روزہ ٹوٹ گیا اور ارادتاً کھا پی لینا۔

انجیکشن لگوانے سے روزہ ٹوٹ جاتا ہے۔

رات سمجھ کر صبح صادق کے بعد سحری کھالی پھر معلوم ہوا کہ صبح صادق کے بعد کھایا پیا تھا یعنی صبح صادق ہوچکی تھی۔

 

وہ چیزیں جن سے روزہ ٹوٹتا نہیں مگر مکروہ ہوجاتا ہے

ٹوتھ پیسٹ یا منجن سے دانت صاف کرنا بھی روزہ میں مکروہ ہیں۔

بلاضرورت کسی چیز کو چبانا یا نمک وغیرہ چکھ کر تھوک دینا۔

کسی مریض کے لیے اپنا خون دینا۔

جھوٹ‘ غیبت‘ چغلی‘ گالی گلوچ کرنا یا کسی کو تکلیف دینا۔

پیاس کی حالت میں پانی کے غرارے کرنا کیونکہ اس صورت سے روزہ ضائع ہونے کا قوی امکان ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں