The news is by your side.

جھوٹ بولنا اور الزام لگانا عمران خان کا وطیرہ بن چکا ہے،رانا ثنا اللہ

لاہور : پنجاب کے وزیرقانون راناثنا اللہ نے عمران‌‌ خان پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ جھوٹ بولنا اور الزام لگانا انکا وطیرہ بن چکا ہے مجھے پتا ہے عمران خان کو کہاں سےچٹ آتی ہے، ان کے گھر کا نقشہ اور نکاح نامہ بھی جعلی ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیر قانون پنجاب رانا ثنا اللہ میڈیا سے گفتگو میں مخالفین پر برس پڑے اور کہا کہ کچھ قوتیں انتخابات میں مثبت نتائج کیلئے نیب کو استعمال کرناچاہتی ہیں، پاناما اور اقامہ مینج کرنے والی قوتیں جمہوریت کنٹرول کرنا چاہتی ہیں۔

پی ٹی آئی چیئرمین سے متعلق رانا ثنا اللہ کا کہنا تھا جھوٹ بولنا اور الزام لگانا انکا وطیرہ بن چکا ہے، جھوٹ اتنا بولو شاید لوگوں کو شک ہویہ کہیں سچ تو نہیں، زبیرگل کے خلاف ان کے پاس کوئی ثبوت نہیں، مجھے پتا ہے عمران خان کو کہاں سے چٹ آتی ہے۔

انھوں نے مزید کہا کہ عمران خان کے گھر کا نقشہ اور نکاح نامہ بھی جعلی ہے، کام آج اور ذکر 2 ماہ بعد تو وہ کام بھی جعلی ہی کہا جائے گا، عمران خان کی جانب سے بلاوجہ الزام لگانا درست نہیں ، عمران خان نے کہا عابد باکسر نے وزیراعلیٰ کے کہنے پر 250قتل کئے۔


مزید پڑھیں :عمران خان کا یہی فارمولا ہے کہ اتنا جھوٹ بولو کہ لوگوں کو سچ لگنےلگے، رانا ثنا اللہ


راناثنا رانا ثناء نے فیصل سبحان سے متعلق لاعلمی کا اظہار کرتے ہوئے کہنا تھا کہ فیصل سبحان کا کیا کردار ہے ہمیں نہیں پتہ، الزام تراشی کرنا انتہائی گھٹیاں پن ہے، عابد باکسر پر جعلی انکاؤنٹر کا ایک بھی مقدمہ نہیں۔

وزیرقانون پنجاب نے کہا کہ نیب پہلے ریکارڈ منگواتی ہے پھر اس کی انکوائری ہوتی ہے ،احد چیمہ کو ان مراحل سے محروم رکھا گیا ، کوئی جمہوری عمل احتساب کے بغیر نہیں چل سکتا ، نیب 2002 میں بھی استعمال ہوئی تھی، چیئر مین نیب نیک نامی کوبرقرار رکھ کر احتساب لازمی کرے ، نیب استعمال نہ ہو ا س پر نظر رکھنی چاہئے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں