The news is by your side.

Advertisement

ہم نےکبھی عدالت کےمعززججز کی ذات پرتنقید نہیں کی‘ راناثنااللہ

لاہور: وزیرقانون پنجاب رانا ثنااللہ کا کہنا ہے کہ عدالتی فیصلوں پرگفتگو اورتنقید کرنا آئینی اور جمہوری حق ہے۔

تفصیلات کے مطابق لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتےہوئے وزیرقانون پنجاب رانا ثنااللہ نے کہا کہ ہم نے کبھی عدالت کے معزز ججز کی ذات پر تنقید نہیں کی، ججز کے فیصلوں پر تنقید ہوسکتی ہے۔

رانا ثنااللہ نے کہا کہ نہال ہاشمی نے عدالت سے غیرمشروط معافی مانگی، انہوں نے کہا کہ میری رائے میں نہال ہاشمی پر توہین عدالت نہیں بنتی۔

وزیرقانون پنجاب کا کہنا تھا کہ سابق وزیراعظم نوازشریف نے پاناما فیصلہ آنے کے بعد اس پرفوری طور پرعمل کیا، اگر وہ فیصلہ ماننے سے انکار کرتے تویہ توہین عدالت ہوتی۔

رانا ثنااللہ کا طاہرالقادری کے متعلق کہنا تھا کہ پاکستان تحریک انصاف نے پوری کوشش کی کہ طاہرالقادری کنٹینرمیں بیٹھ جائیں۔

وزیرقانون پنجاب کا کہنا تھا کہ لاہور دھرنے کے پورے تماشے کے لیے کروڑوں روپے ملے۔


سپریم کورٹ نےنہال ہاشمی کوایک ماہ قید کی سزا سنادی


واضح رہے کہ سپریم کورٹ نے دھمکی آمیز تقریر اور توہین عدالت کیس میں سینیٹرنہال ہاشمی کو ایک ماہ قید اور پچاس ہزار روپے جرمانے کی سزا سنا دی۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر ضرور شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں