site
stats
سندھ

کراچی صدر موبائل مارکیٹ میں رینجرز اور کسٹم حکام کی کارروائی، 12 دکانیں سیل

کراچی: صدر موبائل مارکیٹ میں رینجرز اور کسٹم حکام نے اسمگل شدہ موبائل فون کی موجودگی کی اطلاع پر کارروائی کی، صدر موبائل مارکیٹ کہتے ہیں 12 دکانوں کو سیل کیا گیا ہے کوئی غیر قانونی چیز نہیں ملی

صدر موبائل مارکیٹ میں رینجرز اور کسٹم کے پریونشن ڈیپارٹمنٹ کی جانب سے اسمگل شدہ موبائل فون کی موجودگی کی اطلاع پر ٹارگیٹڈ کارروائی کی گئی۔ کارروائی کے دوران عمارت کا محاصرہ کیا گیا اور نویں منزل پر دکانوں کی تلاشی لی گئی۔ آپریشن کے دوران مقامی تاجروں سے عمارت میں داخل ہونے کی کوشش کی جسکو رینجرز اہلکاروں کے لاٹھی چارج کرکے نے ناکام بنادیا۔

صدر موبائل مارکیٹ ادریش میمن کے مطابق قانون نافز کرنے والے اداروں نے مطلوبہ دستویزات نا ملنے پر 12 دکانوں کو سیل کیا گیا ہے جسمیں سینکڑوں کی تعداد میں موبائل فون اور دیگر اشیا موجود ہیں تاہم سیل کی گئی دکانوں سے کوئی غیر قانونی سامان برآمد نہیں ہوا ہے۔

انکا کہنا تھا کہ رینجرز سے مکمل تعاون کیا گیا ہے، تاجروں میں موجود کالی بھیڑوں کا سفایا ہونا چاہیئے۔ ادریس میمن کا مزید کہنا تھا کہ کسٹم پریونشن ڈیپارٹمنٹ کا کام پورٹ پر ہوتا ہے، آج دوبارہ کارروائی کی جائیگی اور دستویزات بھی طلب کیئے جائینگے۔ تاہم 5 گھنٹے تک کارروائی جاری رہنے کے بعد آپریشن ختم کردیا گیا جسکے بعد مظاہرین منتشر ہوگئے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top