پی ایس پی کارکنان کا قتل میں ایم کیوایم لندن ملوث ہیں، کرنل قیصر rangers
The news is by your side.

Advertisement

پی ایس پی کارکنان کے قتل کی ہدایت بانی ایم کیوایم نے دی، کرنل قیصر

کراچی : ترجمان رینجرز سندھ کرنل قیصر خٹک نے کہا ہے کہ پاک سر زمین پارٹی کے دو کارکنان کے قتل میں ملوث ایم کیو ایم لندن کے ٹارگٹ کلرز کو گرفتار کرلیا گیا ہے جنہیں بانی ایم کیو ایم نے قتل کی ہدایات دیں اور بعد از قتل ملزمان کو واٹس ایپ آڈیو پیغام میں مبارک باد بھی دی۔

کرنل قیصر کراچی میں واقع ہیڈ کوارٹرز میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے جہاں انہوں نے ساؤتھ افریقہ نیٹ ورک کے کارندے عبداللہ کی ملزمان کے ساتھ واٹس ایپ پر ہونے والی آڈیو اور بانی ایم کیو ایم کی ملزمان کو قتل کے بعد دی گئی مبارک باد کی آڈیو ریکارڈنگز سنائیں۔

کرنل قیصر کا کہنا تھا کہ اورنگی ٹاؤن میں پی ایس پی کے دو کارکنان کو قتل کرنے والے زیر حراست ملزمان محمد رحیم اور محمد دانش ایم کیو ایم لندن کے متحرک کارکن ہیں جو کراچی میں خفیہ طورپربانی ایم کیوایم کے حق میں وال چاکنگ بھی کیا کرتے تھے۔

کرنل قیصر نے بتایا کہ ایم کیوایم لندن کے دونوں ٹارگٹ کلرز کو گرفتار کرکے آلہ جرم بھی برآمد کرلیا ہے اور دونوں ملزمان نے پی ایس پی کے کارکنان کی ٹارگٹ کلنگ کا اعتراف بھی کر لیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ ملزمان دانش بائیک چلا رہا تھا جب کہ پیچھے بیٹھے رحیم نے نائن ایم ایم پستول سے ندیم ملا اور راشد پر فائرنگ کی جب کہ واردات کے وقت ملزمان کے دیگر ساتھی بیک اپ پرموجود تھے جن کے نام ملزمان نے اگل دیئے ہیں جنہیں جلد گرفتار کر لیا جائے گا۔

کرنل قیصر نے دہرے قتل کی واردات سے متعلق تفصیلات سے آگاہ کرتے ہوئے بتایا کہ رحیم اور دانش ساؤتھ افریقہ سیٹ اپ سے رابطے میں تھے اوران کے موبائل میں موجود عبداللہ نامی کارندے سے آڈیو گفتگو ملی ہے جس میں ملزمان کو جنوبی افریقہ سے فنڈنگ کے لیے میسج بھی موصول ہوا تھا۔

کرنل قیصر کا کہنا تھا کہ گرفتارملزمان محمد رحیم اور محمد دانش کو اسی عبداللہ نے ساؤتھ افریقہ سے واٹس پر آڈیو پیغام کے ذریعے قتل کی ہدایات دیں اور اسی عبداللہ کی جانب سے کامیاب واردات کے بعد بانی ایم کیو ایم کی جانب سے دی گئی مبارک باد بھی واٹس ایپ پر آڈیو پیغام کے ذریعے ملزمان کو بھیجی۔

انہوں نے کہا کہ ایک وقت تھا جب بانی ایم کیوایم کی ایک کال پرکراچی بند اورجلاؤ گھیراؤ شروع کردیا جاتا تھا اورلاشیں گرائی جاتی تھیں لیکن آج کراچی کے بہادرعوام نے اس طرز سیاست کومسترد کردیا ہے۔

کرنل قیصر نے واضح کیا کہ اس وقت کراچی میں دہشت گردی کا کوئی نیٹ ورک کام نہیں کررہا ہے تاہم لندن اورجنوبی افریقہ سے مالی فنڈنگ ضرور ہوتی ہے جس کے سدباب اور مکمل قیام امن کے لیے رینجرزسندھ نے ایسے تمام عناصر پرکڑی نظر رکھی ہوئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: اورنگی ٹاؤن میں فائرنگ، پی ایس پی کارکن جاں بحق

خیال رہے کہ 17 جولائی کو قطراسپتال اورنگی ٹاؤن کے نزدیک موٹر سائیکل سوار دہشت گردوں نے گھر کے باہر بیٹھے پاک سرزمین پارٹی کے کارکنان ندیم اللہ عرف ملا اور راشد کو گولیاں مار کر قتل کردیا تھا اور فرار ہو گئے تھے جنہیں بعد ازاں رینجرز نے گرفتار کر لیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں