The news is by your side.

Advertisement

جعلی مقابلے میں ہلاک نوجوان کی نماز جنازہ، راؤ انوارکی پھانسی کا مطالبہ

کراچی : نقیب اللہ کے ساتھ راؤ انوار کے جعلی مقابلے میں ہلاک کئے گئے 26 سالہ نوجوان نذرجان کی نماز جنازہ سہراب گوٹھ کے قریب ادا کردی گئی، مقتول کی تدفین وزیرستان میں کی جائے گی، بھائی نے مطالبہ کیا ہے کہ راؤ انوار کو پھانسی پر لٹکایا جائے۔

 تفصیلات کے مطابق مقتول نقیب اللہ کے ساتھ جعلی پولیس مقابلے میں ہلاک ہونے والے نوجوان نذرجان  کے اہل خانہ بھی سامنے آگئے۔

نذر جان کے اہل خانہ اس کی میت سمیت سہراب گوٹھ جرگے میں پہنچ گئے، جعلی پولیس مقابلے میں ہلاک نذر جان کی نماز جنازہ سہراب گوٹھ کے قریب ادا کردی گئی، مقتول کی تدفین وزیرستان میں کی جائے گی۔

یاد رہے کہ نذر جان کو بھی نقیب اللہ کے ساتھ مبینہ جعلی پولیس مقابلے میں ہلاک کیا گیا تھا، نذر جان کے بھائی رشید نے بتایا کہ میرا بھائی چھ ماہ سے لاپتہ تھا، پولیس حرکت میں آئی نہ تاوان کیلئے کوئی فون آیا۔

مقتول کے بھائی نے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ راؤ انوار کو پھانسی پر لٹکایا جائے، نذر جان کے اہل خانہ نے آئندہ کے لائحہ عمل کی ذمہ داری جرگے کو سونپ دی ہے۔

علاوہ ازیں مقتول نذرجان بھی نقیب اللہ کی طرح محسود قبائل اور وزیرستان کا رہائشی تھا، وہ بحریہ ٹاؤن کراچی میں لوڈر کا کام کرتا تھا۔

واضح رہے کہ معطل ایس ایس پی ملیر نے ایک نجی ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ پولیس مقابلے میں چار دہشت گرد مارے گئے تھے جس میں سے صرف ایک نقیب اللہ  پر ہی آواز اٹھائی جارہی ہے، ایک ہی رات میں ماحول بنا دیا گیا کہ میں نے نقیب کو پکڑکرمار دیا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں