The news is by your side.

Advertisement

رشید گوڈیل پر قاتلانہ حملہ: رینجرز اور سیاسی رہنماؤں کی شدید مذمت

رینجرز کی جانب سے ایم کیو ایم کے رہنما رشید گوڈیل پر قاتلانہ حملے کی رینجرز اور مختلف سیاسی رہنماؤں کی جانب سے شدید مذمت کی گئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق ایم کیو ایم کے رہنما رشید گوڈیل پرقاتلانہ حملہ کرنیوالوں کی تلاش میں رینجرز بھی سرگرم ہوگئی ہے، ترجمان رینجرز نےحملےکی شدید مذمت کرتےہوئےکہا کہ حملےکی مختلف زاویوں سےتحقیقات شروع کردی گئی ہیں۔

ترجمان رینجرز کا کہنا تھا کہ حملہ آوروں کوجلد قانون کے کٹہرے میں لایا جائے گا۔ ترجمان نے شہریوں سے اپیل کی ہے کہ کسی کے پاس قاتلوں سے متعلق کوئی معلومات ہیں تو وہ رینجرز کو دیں۔

علاوہ ازیں وزیراعظم ہاؤس سے جاری ہونے والے بیان میں وزیراعظم نواز شریف نے ایم کیو ایم رہنما رشید گوڈیل پر فائرنگ کے واقعے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے ان کی جلد از جلد صحت یابی کے لیے دعا کی ہے۔

ایم کیو ایم قائد الطاف حسین نے بھی رشید گوڈیل پر فائرنگ کی مذمت کرتے ہوئے عوام سے ان کی زندگی کے لیے دعا کرنے کی اپیل کی ہے۔

پاکستان تحریک انصاف کی ترجمان شیریں مزاری نے رشید گوڈیل پر فائرنگ کی مذمت کی ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے رشید گوڈیل پر قاتلانہ حملے کی پر زور الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے آئی جی سندھ کو حملہ آوروں کی فوری گرفتاری کے احکامات دیئے ہیں۔

انہوں نے ایم کیو ایم رہنما فاروق ستار کو ٹیلیفون کرکے اس واقعے پر افسوس کا اظہار کیا اور رشید گوڈیل پر حملہ کرنے والے ملزموں کو ہر قیمت پر گرفتار کرکے انصاف کے کٹہرے میں لانے کی یقین دہانی کرائی۔وزیراعلیٰ سندھ نے رشید گوڈیل کی جلد صحتیابی کیلئے بھی خداوند تعالیٰ سے دعا کی ہے۔

دریں اثناء قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈرسید خورشید شاہ کا کہنا ہے رشید گوڈیل پر حملہ افسوسناک ہے حکومت قاتلوں کو گرفتار کرکے عوام کو سامنے لائے۔

اس کے علاوہ  جمیعت علماء اسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے رشید گوڈیل پر حملے کو مذاکرات سبوتاژ کرنے کی سازش قرار دیا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں