The news is by your side.

Advertisement

پاکستانی ٹیم میں تینوں فارمیٹس کا بہترین کھلاڑی کون ہوسکتا ہے؟

کراچی: سابق وکٹ کیپر بیٹسمین راشد لطیف کا کہنا ہے کہ انگلینڈ کے خلاف بقیہ میچز میں حیدر علی کو ضرور شامل کیا جانا چاہیئے، حیدر علی تینوں فارمیٹس کا بہترین کھلاڑی ثابت ہوسکتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق سابق وکٹ کیپر بیٹسمین راشد لطیف نے اپنے یوٹیوب چینل پر اپ لوڈ کی ہوئی ویڈیو میں کہا ہے کہ پاکستانی ٹیم مینجمنٹ کو انگلینڈ کے ساتھ باقی کے ٹیسٹ میچز کے لیے پلیئنگ 11 میں حیدر علی کو ضرور شامل کرنا چاہیئے۔

راشد کا کہنا تھا کہ حیدر علی کو پلیئنگ الیون میں شامل کرنے کا یہ بہترین وقت ہے، ان کے خیال میں اگر اس وقت حیدر کو ٹیم میں شامل نہیں کیا گیا تو اس محنتی کھلاڑی کا ایک سال ضائع ہوجائے گا۔

ان کا ماننا ہے کہ حیدر علی کرکٹ کی تینوں فارمیٹس (ٹیسٹ، ون ڈے، ٹی 20) میں اپنی جگہ بنا سکتا ہے۔

اپنی ویڈیو میں راشد نے مزید کہا کہ ہم نے حیدر کو پاکستان سپر لیگ میں دیکھا ہے کہ محدود اوورز کے کھیل میں اس کی پرفارمنس شاندار تھی، لیکن میرا خیال ہے کہ اسے ٹیسٹ میں بھی جگہ دی جانی چاہیئے، وہ ٹیسٹ کا بہترین کھلاڑی ثابت ہوگا۔

خیال رہے کہ پاکستان اور انگلینڈ کے درمیان سیریز کے پہلے ٹیسٹ میں پاکستان کو 3 وکٹوں سے شکست ہوچکی ہے، ٹیسٹ سیریز 3 میچز پر مشتمل ہے جس میں انگلینڈ 0-1 کی برتری حاصل کرچکا ہے۔

دونوں کے درمیان دوسرا ٹیسٹ 13 اگست سے ساؤتھ ہمپٹن میں کھیلا جائے گا۔ اس کے بعد دونوں ٹیمیں 28 اگست، 30 اگست اور یکم ستمبر کو 3 ٹی 20 میچز کی سیریز کے لیے مدمقابل ہوں گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں