site
stats
کھیل

پی سی بی نے بکیز کے خلاف کبھی کارروائی نہیں کی، راشد لطیف

کراچی : سابق قومی ٹیسٹ کرکٹر راشد لطیف نے کہا ہے کہ بائیس سال سے فکسرز کیخلاف لڑ رہا ہوں، فکسنگ کی پیشکش مجھے بھی ہوئی، پی سی بی کو کئی بار آگاہ کیا لیکن کوئی کارروائی نہیں کی گئی۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے کراچی میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا، پریس کانفرنس کے دوران سابق کپتان راشد لطیف نے بھی اہم انکشافات کردیئے۔

سابق وکٹ کیپرراشد لطیف نے بتایا کہ انہیں 10 ویں مرتبہ بکیز کی طرف سے فکسنگ کی پیشکش ہوئی تھی جس کے بارے بورڈ کو بتایا مگر پی سی بی نے اس بارے سنجیدگی سے کبھی ایکشن نہیں لیا۔ آفرز مجھے بھی ہوئی ہیں لیکن میں نے ہمیشہ ملک کیلئے کھیلا۔

راشد لطیف نے کہا کہ وہ بکیز اور فکسرز کیخلاف بائیس سال سے اکیلے جنگ لڑ رہے ہیں۔ بائیس سال میں ایک بکی بھی نہیں پکڑا گیا۔ ان کا کہنا تھا کہ اگر بکیز کسی کھلاڑی سے رابطہ کریں تو کھلاڑی بورڈ کو آگاہ کرنے میں گھبراتا ہے کیونکہ بکیز کیخلاف کوئی ایکشن نہیں لیا جاتا مگر کھلاڑیوں پر پابندی لگا دی جاتی ہے۔

انہوں نے سوال کیا کہ بورڈ کا احتساب کون کرے گا ؟ بورڈ کے آفیشلز کی بھی تحقیقات ہونی چاہئیے، فکسنگ ایشو دبانے کی کوششیں کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔

انہوں نے کہا کہ کرکٹ کے قوانین درست کرنے کی ضرورت ہے، فکسنگ پاکستان کرکٹ کو بری طرح تباہ کررہی ہے، ان کا کہنا تھا کہ عمر امین نے پی سی بی کو اس بارے میں رپورٹ کی تھی مگر اب اسے اپنی جان کا خطرہ لاحق ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top