The news is by your side.

Advertisement

چہرے پر سرخ دھبے اور ان کا علاج

وقت کے ساتھ چہرے پر ظاہر ہونے والے سرخ داغ عام طور پر وائرل انفیکشن کی علامت ہوتے ہیں، جسے اردو میں جھائیاں اور انگریزی میں میلازما کہا جاتا ہے۔

جلد کی اس حالت کا زیادہ تر امکان غیر میعاری کاسمیٹکس یا مرہم کے استعمال سے ہوتا ہے جو ہماری جلد کے موافق نہیں ہوتا ہے، جس کا رد عمل الرجی، جلد کی سوزش جلد کی جلن اور جلد کی روغن عوارض کی شکل میں ظاہر ہوسکتا ہے۔

اس حوالے سے اے آر وائی نیوز کے پروگرام باخبر سویرا میں معروف ڈرما ٹولوجسٹ ڈاکٹر خرم مشیر نے اپنے مفید مشوروں سے ناظرین کو آگاہ کیا اور علاج کے آسان طریقے بتائے۔

انہوں نے بتایا کہ غذا کا صحیح استعمال، بے احتیاطی اور ہارمونز کی کمی اور تیز دھوپ سے نہ بچنا بھی اس مرض کی وجوہات میں سے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مہنگی غذائیں کھانے کی ضرورت نہیں سادہ سبزی کھائیں، کھانے کے ساتھ پیاز کا سلاد شوق سے کھائیں۔

جلد کی صحت یابی کے لئے روزانہ غسل، تازہ ہوا میں سانس لینا اور روزانہ ورزش کرنا بہت ضروری ہے، اکثر چہروں پر خوراک کی کمی یا عدم توجہ کے باعث داغ دھبے نمودار ہوجاتے ہیں۔

موسموں کے تغیرات بھی انسانی جلد کو متاثر کرتے ہیں جن کے نتائج چہرے پر چھائیوں اور کیل مہاسوں کی صورت میں ظاہر ہوتے ہیں۔

اپنی شکایت کی صحیح وجہ معلوم کرنے کے لیے آپ کو فوری طور پر کسی ڈاکٹر سے مشورہ کرنا چاہئے تاکہ آپ کا مکمل جسمانی معائنہ کیا جاسکے اور امید ہے کہ اس سے بہتر مدد ملے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں