The news is by your side.

Advertisement

حبیب جان کے الزامات پر رحمان ملک کا ردعمل آگیا

کراچی: پیپلزپارٹی کے رہنما اور سابق وزیر داخلہ رحمان ملک کا کہنا ہے کہ حبیب جان کا دعویٰ مسترد کرتا ہوں، الزامات جھوٹ پر مبنی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق پیپلزپارٹی کے رہنما اور سابق وزیر داخلہ رحمان ملک نے عزیر بلوچ کے ساتھی حبیب جان کے الزامات کو جھوٹ کا پلندہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ حقائق عوام کے علم میں ہیں اور ریکارڈ وزارت داخلہ میں موجود ہے۔

رحمان ملک نے کہا کہ حبیب جان پارٹی ٹکٹ نہ ملنے پر پیپلزپارٹی سے ناراض تھے، ٹکٹ نہ ملنے پر حبیب جان عزیر بلوچ سے مل گئے اور پھر بعد میں برطانیہ چلے گئے۔

پیپلزپارٹی رہنما کا کہنا تھا کہ پوری زندگی میں کبھی عزیر بلوچ سے نہیں ملا، سابق صدر آصف زرزداری نے عزیر بلوچ کو کبھی کسی قسم کی مراعات نہیں دیں۔

یہ پڑھیں: علی زیدی نے عزیر بلوچ کے دوست حبیب جان کی دھماکا خیز ویڈیو جاری کر دی

رحمان ملک نے کہا کہ عزیر بلوچ کو حمایت حاصل ہوتی تو زرداری اس کے خلاف ایکشن کی منظوری کیسے دیتے، آصف زرداری کے خلاف جھوٹا پروپیگنڈہ فقط سیاسی مخالفت میں کیا جارہا ہے۔

واضح رہے کہ وفاقی وزیر علی زیدی نے ویڈیو ٹویٹ کی تھی جس میں حبیب جان نے بتایا تھا کہ جب عزیر بلوچ واپس آیا تو قائم علی شاہ، شرمیلا فاروقی اور فریال بھی عزیر سے ملنے گئیں، اس کے بعد میرے دفتر پر حملہ ہوا اور میرا بھائی زخمی ہوا، جو بعد میں شہید ہوا۔ لیکن بقول چوہدری اسلم اور رحمان ملک کے سب معاملات کا سرغنہ وہ مجھے گردانتے تھے۔

انھوں نے بتایا کہ عزیر بلوچ کا گروپ آئی جی سمیت سندھ میں سب پولیس افسران کے تبادلے کرتا تھا، وزارت داخلہ رحمان ملک کی صورت ان کے دروازے پر کھڑی رہا کرتی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں