The news is by your side.

Advertisement

پاکستان کا نام مذہبی آزادی فہرست میں شامل کرنے کو مسترد کرتے ہیں، دفتر خارجہ

اسلام آباد : ترجمان دفترخارجہ نے امریکہ کی جانب سے مذہبی آزادی کی خلاف ورزی کرنے والے ممالک کی فہرست میں پاکستان کو شامل کرنے کو مسترد کردیا۔

امریکی محکمہ خارجہ نے مذہبی آزادی کی خلاف ورزی والے ممالک کی فہرست جاری کی ہے، اس حوالے سے ترجمان دفتر خارجہ کا کہنا ہے کہ پاکستان کا نام مذہبی آزادی فہرست میں شامل کرنے کو مسترد کرتے ہیں۔

ترجمان دفترخارجہ زاہد حفیظ چوہدری نے کہا کہ پاکستان کو اس فہرست میں شامل کرنا حقائق کے منافی ہے، امریکی محکمہ خارجہ کےاس عمل سے شکوک وشبہات جنم لیتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ پاکستانی معاشرہ مختلف مذاہب اور مذہبی ہم آہنگی پر مشتمل ہے، پاکستان کا آئین ہرقسم کی مذہبی آزادی اور اقلیتوں کو تحفظ فراہم کرتا ہے جبکہ بھارت میں اقلیتوں کے ساتھ انتہائی نارواسلوک کیا جاتا ہے۔

ترجمان دفترخارجہ کا کہنا تھا کہ ایسا غلط اندراج دنیا میں مذہبی آزادی کے مقصد کو نقصان پہنچانے کا باعث ہے، ماضی میں پاکستان اور امریکا اس موضوع پر باہمی طور پر کام کرتے رہے ہیں، امریکا کی جانب سے حقیقت کو نظرانداز کرنا افسوسناک عمل ہے۔

زاہد حفیظ چوہدری نے کہا کہ بھارت میں اقلیتوں سے بدترین سلوک نظرانداز کرنے سے رپورٹ پر سوال اٹھتا ہے، مسلمانوں کے خلاف ریاست کی سرپرستی میں تشدد ریکارڈ کا حصہ ہے، پاکستان نے معاملے پرجائزہ لینے کےحوالے سےامریکا کو آگاہ کردیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں