محکمہ جیل خانہ جات کا سندھ میں جیلوں کی ابتر صورتحال کا اعتراف -
The news is by your side.

Advertisement

محکمہ جیل خانہ جات کا سندھ میں جیلوں کی ابتر صورتحال کا اعتراف

کراچی: محکمہ جیل خانہ جات نے سندھ میں جیلوں کی ابتر صورتحال کا اعتراف کرلیا۔ محکمے کے مطابق 24 سو قیدیوں کی گنجائش والی جیل میں 4 ہزار سے زائد قیدی موجود ہیں۔

تفصیلات کے مطابق محکمہ جیل خانہ جات نے سندھ کی جیلوں سے متعلق رپورٹ جاری کردی جس میں جیلوں کی ابتر صورتحال کا اعتراف کرلیا گیا۔

محکمہ جیل خانہ جات کی رپورٹ کے مطابق ہر سال جیلوں میں قیدیوں کی تعداد بڑھ رہی ہے۔ رپورٹ میں کہا گیا کہ سینٹرل جیل کراچی کی گنجائش 2400 ہے لیکن اس وقت وہاں 4 ہزار 846 قیدی موجود ہیں۔

رپورٹ میں کہا گیا کہ کراچی کی ملیر جیل میں گنجائش سے 3 ہزار 449 زائد قیدی موجود ہیں۔

محکمے کا کہنا ہے کہ کراچی کے ہر ضلع میں ڈسٹرکٹ جیل کی ضرورت ہے۔ علاوہ ازیں ایک ہزار انتہائی خطرناک قیدیوں کے لیے ہائی سیکیورٹی جیل کی تعمیر التوا کا شکار ہے۔

خیال رہے کہ جیلوں کی ابتر صورتحال سے متعلق کیس سپریم کورٹ میں بھی زیر سماعت ہے۔ ایک سماعت کے دوران نمائندہ محتسب نے عدالت کو بتایا تھا کہ پاکستان میں 98 جیلیں ہیں۔ جیلوں میں 56 ہزار سے زائد قیدیوں کی گنجائش ہے جبکہ 78 ہزار 1 سو 60 قیدی جیلوں میں موجود ہیں۔

عدالت نے وفاقی محتسب سے جیل کی بہتری کے لیے تجاویز بھی طلب کی تھیں جس کے لیے چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کا کہنا تھا کہ دی گئی تجاویز اور سفارشات پر عملدر آمد کروانا چیف سیکرٹریز اور آئی جیز کی ذمہ داری ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں