site
stats
اہم ترین

اقرار الحسن کی گرفتاری کا عمل مناسب نہیں، رپورٹرز ود آؤٹ بارڈرز

رپورٹرز ود آؤٹ بارڈرز کا کہنا ہے کہ اقرار الحسن کی گرفتاری کا معاملہ حکومت پاکستان سے اٹھائیں گے۔

تفصیلات کے مطابق اے آر وائی نیوز کے اینکر پرسن اقرار الحسن کی گرفتاری پر آزادی صحافت کے لیے کام کرنے والی عالمی تنظیم رپورٹرز ود آؤٹ بارڈرز کا کہنا ہے کہ اقرار الحسن نے اچھے مقصد کے لیے یہ کوشش کی اور سیکیورٹی خامیوں کی نشاندہی کی۔

تنظیم کا کہنا تھا کہ سیکیورٹی خامیوں کے باعث ہی نائن الیون جیسے واقعات ہوئے تھے۔ دنیا بھر میں صحافی ہی مسائل کی نشاندہی کرتے ہیں۔ اقرار الحسن کی گرفتاری کا فیصلہ مناسب نہیں ہے۔

کل سندھ اسمبلی کے اجلاس میں اقرار الحسن نے اسٹنگ آپریشن انجام دیا تھا جس کا مقصد اسمبلی کی ناقص سیکیورٹی کی طرف حکام کی توجہ دلانا تھا۔

حکام نے اقرار کے اس اقدام کو سراہنے کے بجائے انہیں حراست میں لے لیا تھا۔ اقرار کو ساری رات عدالت میں رکھا گیا۔ آج صبح انہیں عدالت میں پیش کیا جائے گا۔ ان پر 2 مقدمات درج کیے گئے ہیں۔

اس سے قبل اقرار کی گرفتاری کی خبر سنتے ہی آرام باغ تھانے کے باہر صحافیوں اور عوام کی بڑی تعداد جمع ہوگئی اور اقرار کے اقدام کی حمایت کی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top