The news is by your side.

Advertisement

ٹوبہ ٹیک سنگھ میں‌ ظلم کی انتہا: پنچایت کا زیادتی کے بدلے زیادتی کا حکم

ٹوبہ ٹیک سنگھ: صوبہ پنجاب کی تحصیل ٹوبہ ٹیک سنگھ میں ظلم و بربریت کی انتہا ہوگئی۔ پنچایت نے بہن کو ونی کر دیا۔ لڑکی کی زیادتی کے بدلے میں‌ ملزم کی بہن سے زیادتی کا حکم دے دیا.

تفصیلات کے مطابق ٹوبہ ٹیک سنگھ میں‌ پنچایت نے فرسودہ روایات کی پاس داری میں‌ ظلم کی انتہا کر دی. زیادتی کے بدلے زیادتی کرنے کا حکم دے دیا، جس کی تکمیل میں‌ متاثرہ لڑکی کے بھائی نے ملزم کی بہن کو زیادتی کا نشانہ بنایا.

ملزم کو قانون سے بچانے کے لیے رشتے داروں نے اپنے گھر کی بیٹی زیادتی کے لیے متاثرہ خاندان کے حوالے کر دی

یہ واقعہ پیر محل میں‌ پیش آیا. کچھ عرصے قبل ایک شخص نے پڑوس میں‌ رہنے والی ایک لڑکی کو زیادتی کا نشانہ بنایا تھا. واقعے کے بعد پنچایت بٹھائی گئی.

پنچایت نے جہالت اور بے حسی کی انتہا کرتے ہوئے ملزم کی بہن کو ونی کرنے کا انسانیت سوز فیصلہ سنایا. ملزم کو قانون سے بچانے کے لیے رشتے داروں نے اپنے گھر کی بیٹی زیادتی کے لیے متاثرہ خاندان کے حوالے کر دی۔

پولیس کا کہنا ہے کہ پنچائت کے فیصلے پر متاثرہ لڑکی کے بھائی نے ملزم کی بہن کو زیادتی کا نشانہ بنایا۔

دونوں خاندانوں میں صلح نامے کا اسٹامپ پیپر لکھنے پریہ افسوس ناک واقعہ منظرعام پر آیا۔ اسٹامپ فروش نے پولیس کو واقعے کی اطلاع دی، تب قانون حرکت میں آگیا.

ملزمان اور پنچایت کے 10 افراد کے خلاف مقدمہ درج کر کے زیادتی کے دونوں ملزمان کا 4 روزہ جسمانی ریمانڈ حاصل کر لیا ہے۔


پنچایت کا حکم، دو شہریوں‌ پر سرعام تشدد، ویڈیو وائرل


بھائی کی پسند کی شادی کی سزا، پنچایت نے بہن کو ونی کردیا


Comments

comments

یہ بھی پڑھیں