ریکس ٹیلرسن بیکار شے کی مانند تھے، ٹرمپ سابق وزیر خارجہ پر برس پڑے Rex Taylorson
The news is by your side.

Advertisement

ٹیلرسن بیکار شے کی مانند تھے، ٹرمپ سابق وزیر خارجہ پر برس پڑے

واشنگٹن : ڈونلڈ ٹرمپ نے سابق امریکی وزیر خارجہ کی تنقید پر رد عمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ ریکس ٹیلرسن کند ذہن تھے اسی لیے انہیں برطرف کیا۔

تفصیلات کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سابق وزیر خارجہ ریکس ٹیلرسن کی جانب سے کی گئی تنقید پر غصے سے پھٹ پڑے اور ٹیلرسن کے خلاف مغلظات بکنے لگے۔

امریکی صدر ٹرمپ نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ٹویٹ کیا کہ سابق وزیر خارجہ انتہائی کاہل اور کند ذہن تھے جس کے باعث انہیں عہدے سے ہٹانا پڑا۔

ٹرمپ نے ٹویٹر پر لکھا کہ ریکس ٹیلرسن کا ذہنی معیار وہ نہیں تھا جو ایک مملکت کے وزیر خارجہ کا ہونا چاہیے، وہ ایک بیکار شے کی مانند تھے، سارے معمالات اپنی مرضی سے چلاتے تھے۔

امریکی صدر کا کہنا تھا کہ وہ پست ذہانت اور سست طبیعت کے حامل شخص تھے، انہیں برطرف کرنے کے بعد سے بہتر نتائج آنا شروع ہوئے ہیں۔

خیال رہے کہ ریکس ٹیلرسن نے جلسے کے دوران خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ ٹرمپ ایسے امور کی انجام دہی پر زور دیتےتھے جس کی قانون کی طرف سے اجازت نہیں تھی اور نہ ہی اس کام کی کوئی اہمیت ہوتی تھی۔

سابق امریکی وزیر خارجہ نے کہا تھا کہ ڈونلڈ ٹرمپ کو بارہا سمجھایا کہ معاہدوں سے دستبرداری اور قانون کو نظر انداز کرکے کوئی کام انجام نہیں پاسکتا۔

تقریر کے دوران ریکس ٹیلرسن نے کہا کہ میں صدر ٹرمپ کو بار بار ٹوکتا تھا جس سے وہ تنگ آچکے تھے اسی لیے انہوں نے مجھے میرے عہدے سے دست بردار کردیا۔

ڈونلڈ ٹرمپ نے ساتھ ہی ساتھ اپنے نئے وزیر خارجہ کی تعریفوں کے پُل باندھتے ہوئے کہا کہ مائیک پومپیو نے وزارت خارجہ کو دوبارہ زندگی دی ہے۔

مائیک پومپیو اپنی ذمہ داری بخوبی انجام دے رہے ہیں مجھے ان کی کارکردگی پر فخر ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں