The news is by your side.

Advertisement

روس کی طالبان حکومت کی تقریب حلف برداری میں شرکت کے لیے شرط عائد

ماسکو: روس نے طالبان حکومت کی تقریب حلف برداری میں شرکت کے لیے شرط عائد کر دی ہے۔

روسی میڈیا کے مطابق پیر کو روسی وزیر خارجہ سرگئی لاوروف نے کہا ہے کہ روس افغان حکومت کی حلف برداری تقریب میں شرکت اور طالبان حکومت کی معاونت کرے گا، لیکن صرف تب ہی جب حکومت سازی تمام دھڑوں کو ملا کر کی گئی ہو۔

واضح رہے کہ کابل پر طالبان کے قبضے کے بعد اب ماسکو محتاط انداز میں یہ جائزہ لے رہا ہے کہ مستقبل میں اپنے پڑوسی ملک افغانستان سے کیسے تعلقات رکھے اور صورتِ حال سے کیسے فائدہ اٹھائے؟

خیال رہے کہ طالبان کی جانب سے پاکستان، چین، روس اور دیگر ممالک کو حکومت سازی کی تقریب میں شرکت کی باقاعدہ دعوت دی گئی ہے، یہ دعوت ایک ایسے دن دی گئی ہے جب طالبان نے افغانستان کے آخری جنگی محاذ پنجشیر کو بھی فتح کرنے کا اعلان کیا۔

طالبان نے وادی پنجشیر پر قبضہ کرلیا، ذبیح اللہ مجاہد

طالبان کی جانب سے ٹوئٹر پر کہا گیا کہ اسلامی امارات نے پاکستان، ترکی، قطر، روس، چین اور ایران کو نئی حکومت کی تقریب میں شرکت کی دعوت دی ہے۔

آج طالبان نے کابل کے شمال میں وادی پنجشیر پر قبضہ کر نے کا دعویٰ کیا ہے، ترجمان نے دعویٰ کیا کہ کچھ باغی ہلاک اور باقی تمام فرار ہوگئے، ترجمان افغان طالبان ذبیح اللہ مجاہد نے کہا کہ افغان طالبان نے پنجشیر وادی کو فتح کر لیا ہے، علاقے پر قبضے کے بعد جنگ اب ختم ہوگئی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں