شام کا معاملہ: روس کی امریکا کو باز رہنے کی دھمکی: SYRIA: US: RUSSIA
The news is by your side.

Advertisement

شام کا معاملہ: روس کی امریکا کو باز رہنے کی دھمکی

ماسکو: شام کے معاملے پر روس نے امریکا کو دھمکی دی ہے کہ وہ کسی قسم کی غیر قانونی جارحیت سے باز رہے۔

تفصیلات کے مطابق روسی حکام نے یہ خدشہ ظاہر کیا ہے کہ امریکا شام میں نئے حملے کی منصوبہ بندی کر رہا ہے جس کے پیش نظر روس نے امریکا کو باز رہنے کی دھکمی دی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکا میں تعینات روسی سفیر ایناتولی اینتونوف نے امریکی حکام کو بتایا کہ ماسکو حکومت کو اس طرح کی علامات پر شدید تحفظات ہیں کہ امریکا شام میں نئے حملوں کی منصوبہ بندی کر رہا ہے۔

خیال رہے کہ روسی سفیر کی جانب سے رواں ہفتے کے آغاز میں ان تحفظات کا اظہار کیا گیا تھا، تاہم اس حوالے سے تفصیلات آج منظر عام پر آئی ہیں، ایناتولی نے امریکی حکام کو شام کے خلاف جارحانہ اقدامات اختیار کرنے پر خبردار کیا ہے۔

نیویارک: شام کی صورتحال کے ذمہ دار عالمی برادری ہے

اپنے جاری کردہ بیان میں روسی سفیر کا کہنا تھا کہ رواں ہفتے امریکی حکام سے ملاقاتیں بھی کیں، جن میں شام کے لیے خصوصی امریکی نمائندے جیمز جیفری بھی شامل تھے، ان سے شام کے موضوع پر تبادلہ خیال ہوا تھا۔

خیال رہے کہ اس بات کے امکانات اور خدشات سامنے آئے ہیں شامی فورسز خود بھی شام کے علاقوں پر حملے کے انتظامات کر رہی ہیں، جبکہ امریکی اتحادی فورسز شامی حکومتی فورسز کو اس طرح کی کسی کارروائی کو روکنے کے لیے حملے کا نشانہ بھی بنا سکتی ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں