The news is by your side.

Advertisement

روس کی امریکی بحری جہاز کو تباہ کرنے کی دھمکی، نشانے پرلے لیا

روسی فیڈریشن کے قومی دفاع برائے دفاعی انتظام نے بتایا کہ روس کی بلیک سی فلیٹ افواج ہفتہ کے روز بحیرہ اسود میں داخل ہونے والے امریکی گائیڈڈ میزائل تباہ کن یو ایس ایس راس بحری جہاز کی نقل و حرکت پر نظر رکھے ہوئے ہے۔

انہوں نے دھمکی دی ہے کہ اگر اس امریکی بحری جنگی جہاز نے بھی روسی سرحد کی خلاف ورزی کرنے کی کوشش کی تو اس پر حملہ کرکے تباہ کرسکتے ہیں۔

مرکز نے ایک بیان میں کہا کہ روسی بحریہ کے بحیرہ اسود کے بحری بیڑے کی فورسز نے 26 جون کو بحیرہ اسود میں داخل ہونے والے امریکی بحریہ کے راس بحری جہاز پر گہری نظر رکھی ہوئی ہے۔

اس سے قبل روس نے بحیرہ اسود میں پیش آنے والے واقعہ کے بعد یہ بات واضح کی تھی کے آئندہ کسی ملک نے روسی سرحد کے قریب آنے کی کوشش کی تو اس کا انجام بھی ایسا ہی کریں گے۔

یاد رہے کہ روسی سمندر میں داخل ہونے کی کوشش پر برطانوی جہاز مشکل میں پھنس گیا تھا، جس میں روسی فورسز نے انتباہی بم برسا کر برطانوی جہاز کو بھاگنے پر مجبور کردیا تھا۔

روسی حکام نے برطانیہ سمیت تمام ممالک کو خبردار کرتے ہوئے کہا تھا کہ جو ملک بھی روسی سمندری حدود کی خلاف ورزی کرے گا، اسے سنگین نتائج کا سامنا کرنا پڑے گا۔

روس کے نائب وزیر خارجہ نے کہا کہ روس کی سلامتی ہماری اولین ترجیح ہے۔ اگر کوئی ملک عالمی قوانین کی پاسداری نہیں کرتا اور روس کی سلامتی کو خطرے میں ڈالنے کی کوشش کرتا ہے تو روس اپنی افواج کو سرحدوں کے دفاع کے لیے استعمال کرسکتا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں