The news is by your side.

ماہرین نے روس کے روبوٹ کتے کو قاتل مشین قرار دے دیا (ویڈیو)

ماسکو: روس نے ایک ایسا جنگی روبوٹ کتا تیار کر لیا ہے جو نہایت خطرناک اور حیران کن ہے۔

تفصیلات کے مطابق پیٹھ پر نصب اینٹی ٹینک راکٹ لانچر سے لیس ایک روبوٹک کتا پیر کو روس کے سالانہ آرمی 2022 بین الاقوامی اسلحہ ایکسپو میں منظر عام پر آنے کے بعد تیزی سے وائرل ہو گیا ہے۔

روس میں اسلحہ نمائش میں پیش کیا گیا یہ جنگی روبوٹ ڈاگ ٹینک کو تباہ کرنے والا راکٹ لانچر چلا سکتا ہے، اور ایم 81 سسٹم سے لیس ہے، اس روبوٹ کی قیمت سوا پانچ لاکھ رپے مقرر کی گئی ہے۔

ماہرین نے اس روبوٹک ڈاگ کو قاتل مشین قرار دے دیا ہے۔

M-81 کمپلیکس کے نام سے موسوم، اس خطرناک کتے کی ایک ویڈیو بھی جاری کی گئی ہے، جس میں اسے چلتے ہوئے، لیٹتے اور گھومتے ہوئے دکھایا گیا ہے۔

یہ روبوٹ کتا بنانے والی غیر معروف روسی انجینئرنگ کمپنی مشین انٹیلیکٹ نے کہا کہ اس کی سب سے خاص اور نہایت منفرد صلاحیت ہتھیاروں کو لے جانا اور فائر کرنا ہے۔

ویڈیو میں روبوٹک کتے کی پیٹھ پر RPG-26 اینٹی ٹینک راکٹ لانچر دکھائی دیتا ہے، یہ راکٹ لانچر لوڈ ہونے پر 3 کلوگرام تک وزنی ہوتا ہے، اور اس میں نشانہ باندھنے والے آلات بھی لگے ہیں۔

یہ روبوٹ کتا سیڑھیاں بھی بہ آسانی چڑھ سکتا ہے، اور اسے ہدف والے ناہموار علاقوں میں معمول کے دیگر کاموں مثلاً دوائیں پہنچانے کے لیے بھی استعمال کیا جا سکتا ہے۔

ویڈیو اور روسی میڈیا میں شائع ہونے والے چند تبصروں کے علاوہ کتے کی صلاحیتوں کے بارے میں زیادہ معلومات دستیاب نہیں ہیں، نیوز ویک کی رپورٹ کے مطابق روبوٹک کتے کو سویلین اور ملٹری آپریشنز کو مدنظر رکھتے ہوئے تیار کیا گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں