لندن: سیاہ فام خاتون سے بد اخلاقی کرنے والے متعصب شخص نے معافی مانگ لی Ryanair racism
The news is by your side.

Advertisement

لندن: سیاہ فام خاتون سے بد اخلاقی کرنے والے متعصب شخص نے معافی مانگ لی

لندن : بارسلونا سے برطانیہ جانے والی پرواز میں سیٹ کے معاملے پر بزرگ خاتون سے بد اخلاقی کرنے والے مسافر نے معافی مانگ لی تاہم متاثرہ خاتون معاف کرنے سے انکار کردیا۔

تفصیلات کے مطابق برطانوی فضائی کمپنی رائن ایئر میں سیاہ فام خاتون سے غیر اخلاقی رویہ اختیار کرنے والے مسافر نے خاتون اپنے رویے پر معافی مانگتے ہوئے کہا ہے کہ ’میں نسل پرست نہیں ہوں‘۔

برطانوی خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ دیوڈ میشہر 19 اکتوبر کو بارسلونا سے اسٹنس ٹید آنے والے پرواز میں سفر کررہے تھے، جس دوران انہوں نے بزرگ خاتون ڈیلسی گائلی نامی خاتون کی بے عزتی کی تھی۔

مقامی خبر رساں ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے ڈیوڈ نے بتایا کہ ’میں نسل پرست نہیں ہوں لیکن کچھ لمحوں کے لیے مجھے غصّہ آجاتا ہے‘۔

ڈیوڈ میشہر کا کہنا ہے کہ ڈیلسی گائلی نامی بزرگ خاتون سے سیٹ کے معاملے پر تنازعہ ہوا تھا۔

Ryanair racism

مقامی میڈیا کے مطابق ڈیوڈ نے بتایا کہ ’میں غصّے میں آگیا اور انہیں نشت سے اٹھنے کا کہا، میں نسل پرست کا متعصب شخص نہیں ہوں شاید اس وقت میں بے قابو ہوگیا تھا‘۔

دوسری جانب 77 سالہ خاتون ڈیلسی گائلی اور ان کی بیٹی کارلو نے مذکورہ برطانوی شہری کی مذرت کو منسوخ کردیا ہے۔

برطانوی خبر رساں ادارے نے متاثرہ خاتون سے پوچھا کہ آپ نے ڈیوڈ کو معاف کردیا تو ان کا کہنا تھا کہ ’میرا نہیں خیال‘۔ آپ کو بھول کر معاف کردینا چاہیے لیکن جو اس نے میرے ساتھ کیا اسے بھولنے کے لیے طویل وقت درکار ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں