The news is by your side.

Advertisement

ایس 400 میزائل سسٹم ترکی اور امریکا کو تصادم کی جانب لےجارہا ہے، رپورٹ

واشنگٹن :امریکی ذرائع ابلاغ نےجاری رپورٹ میں انکشاف کیا ہے کہ روسی ساختہ ایس 400دفاعی نظام نیٹو اتحادی امریکا اور ترکی کو دھیرے دھیرے تصادم کی طرف لے جا رہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق امریکی اخبار نے دعویٰ کیا ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ روس سے ایس400 دفاعی نظام کی خریداری کی صورت میں ترکی کے خلاف امریکی دشمنوں کے لیے وضع کردہ قانون کا استعمال کر سکتے ہیں۔

امریکی اخبارنے اپنی رپورٹ میں بتایاکہ جاپان کے شہر اوساکا میں جی 20اجلاس کے موقع پر امریکی صدر نے دیگرعالمی رہ نماﺅں کے ساتھ ترک ہم منصب رجب طیب ایردوآن سے بھی ملاقات کی جس میں روسی ساختہ ایس 400 دفاعی نظام کی خریداری روکنے کے لیے ترک صدر پر دباؤ ڈالا گیا۔

طیب اردوان نے ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے عندیہ دیا کہ ترکی کے مبہم منصوبوں یعنی روسی دفاعی نظام ایس 400کی خریداری پر امریکا ترکی پر پابندیاں نہیں لگائے گا۔

اخبار کے مطابق اوساکا کانفرنس میں ٹرمپ نے ترکی کے حوالے سے نرم اور دوستانہ لہجہ اپنایا مگر حقیقت یہ ہے کہ روسی ساختہ ایس 400دفاعی نظام دونوں ملکوں کو دھیرے دھیرے تصادم کی طرف لے جا رہا ہے، لگتا ہے کہ دونوں ملک دفاعی نظام کی وجہ سے ایک دوسرے کے ساتھ متصادم ہو سکتے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں