فیس بک پرمسلمان مخالف اسٹیٹس اپڈیٹ کرنے پرفرانسیسی خاتون گرفتار -
The news is by your side.

Advertisement

فیس بک پرمسلمان مخالف اسٹیٹس اپڈیٹ کرنے پرفرانسیسی خاتون گرفتار

پیرس: فرانسیسی پولیس نے اپریل میجرنامی ایک خاتون کو فیس بک اسٹیٹس کے ذریعے مسلم کلائنٹس پراپنے سیلون میں آنے کی ممانعت جاری کرنے پرگرفتارکرلیا۔

بلنکس آف بائسسٹرنامی اس سیلون کے فیس بک پیج پر اپلوڈ کئے گئے اسٹیٹس میں کہا گیا تھا کہ ’’ہم اسلامی عقیدے کے حامل کلائنٹس کی بکنگ نہیں لیں گے خواہ انہیں برطانیہ جاری کررکھا ہو‘‘، خاتون نے اسٹیٹس میں یہ بھی لکھ کہ ’’ہم معذرت خواں ہیں پراب ملک کو ترجیح دینے کا وقت ہے‘‘۔ تاہم بعد ازاں یہ اسٹیٹس ڈیلیٹ کردیا گیا۔

پولیس کو اس سلسلے میں کئی شکایات موصول ہوئیں جس کے بعد تھیمس ویلی پولیس نے خاتون کو فرانسیسی آئین کی دفعہ 19 کے پبلک آرڈر ایکٹ کے تحت گرفتار کرلیا جس میں واضح ہے کہ ’’الفاظ، افعال یا کسی شے کی نمائش کے ذریعے مذہبی جذبات کا استحصال قابلِ تعزیر جرم ہے‘‘۔

اپریل میجرنے دورانِ حراست اپنے دفاع میں کہا ہے کہ نسل پرست نہیں ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں