The news is by your side.

Advertisement

نوازشریف بیرون ملک جانے کے لئے حکومت پر دباؤ ڈالنا چاہتے ہیں، صمصام بخاری

نوازشریف فیملی کو کبھی ملاقات سے نہیں روکا، جیل کے مینوئل پر عملدرآمد کیا جاتا ہے

اسلام آباد : وزیر اطلاعات پنجاب صمصام بخاری نے کہا ہے کہ نواز شریف بیرون ملک جانے کے لئے حکومت پر دباؤ ڈالنا چاہتے ہیں ہم نے ان کے خاندان کے افراد کو کبھی ملاقات سے نہیں روکا۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے اے آر وائی نیوز کے پروگرام پاور پلے میں میزبان ارشد شریف سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا، صمصام بخاری نے کہا کہ نوازشریف کی بیماری پر سوال نہیں اٹھا رہا، لوگ ہم سے سوال کرتے ہیں کہ انہیں یہ سہولت میسر ہے یا نہیں۔

ہم نے نوازشریف فیملی کو کبھی بھی ملاقات سے نہیں روکا، جیل کے مینوئل پر عملدرآمد کیا جاتا ہے، پچھلے دو ہفتوں کے دوران میاں صاحب کی فیملی اور دوستوں سے متعدد ملاقاتیں ہوئیں۔

ایک سوال کے جواب میں وزیراطلاعات پنجاب کا کہنا تھا کہ مجھے پتہ ہے انہیں کیا کیا پیشکش کی گئی ہیں لیکن نوازشریف باہر جانے کے لئے حکومت پر دباؤ ڈالنا چاہتے ہیں، علاج کیلئے باہرجانے کی اجازت ہم نہیں عدالت دے سکتی ہے.

انہوں نے کہا کہ وزیراعظم کی پالیسی ہے کوئی این آر او نہیں دیا جائے گا، سپریم کورٹ ضمانت دے کر کہہ سکتی ہے ای سی ایل پر نام برقرار ہے گا۔

صمصام بخاری نے مزید کہا کہ ن لیگ اتنے سال تک اپنے بنائے گئے اسپتالوں کی تعریف کرتی رہی، اس کے باوجود نواز شریف ملک سے باہر جاکر علاج کرانے پر بضد ہیں، میاں صاحب نے کہا تھامیری انگلیاں سن ہورہی ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں