The news is by your side.

Advertisement

کالعدم تنظیموں کے خلاف آپریشن میں پنجاب کی کارکردگی بہتر

لاہور: وزیر اطلاعات پنجاب صمصام بخاری کا کہنا ہے کہ کالعدم تنظیموں کے خلاف آپریشن 4 مارچ سے شروع ہوا تھا، پنجاب نے تمام صوبوں کے مقابلے میں بہتر کارکردگی دکھائی۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اطلاعات پنجاب صمصام بخاری نے نیوز کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ وزیر اعلیٰ پنجاب کی زیر صدارت کابینہ اجلاس ہوا ہے، کابینہ اجلاس میں ایک دو سنجیدہ ایشوز پر تبادلہ خیال ہوا۔

صمصام بخاری کا کہنا تھا کہ کالعدم تنظیموں کے خلاف آپریشن 4 مارچ سے شروع ہوا تھا، پنجاب نے تمام صوبوں کے مقابلے میں بہتر کارکردگی دکھائی۔ کالعدم تنظیموں کو سرکاری تحویل میں لینے کا فیصلہ کیا گیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ کالعدم تنظیموں کے خلاف آپریشن جاری ہے اور چلتا رہے گا۔

صوبائی وزیر اطلاعات کا کہنا تھا کہ عید سے پہلے رمضان بازار عید بازار میں تبدیل ہوجائیں گے، عدالتی حکم تھا فی لیٹر پانی پر ایک روپے ٹیرف لگایا جائے۔ پانی کی فیس کے لیے الگ اکاؤنٹ بنایا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ اجلاس میں اسکول ایجوکیشن میں اساتذہ کی ٹرانسفر پر بریفنگ دی گئی، ایل ڈی اے کے قوانین میں ترامیم کا فیصلہ کیا ہے۔ ڈویلپمنٹ اتھارٹی 19-2018 کی بھی تصدیق کی گئی۔

اس سے قبل صمصام بخاری کا کہنا ہے کہ نیب کیسز میں شریف برادران پلی بارگین کرنے کے لیے تیار تھے، شریف برادران کہتے تھے ہمارے پاس رسیدیں نہیں ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ سابق ادوار میں ڈالر کو مصنوعی طریقے سے روکا گیا تھا، تین ماہ میں مہنگائی کی شرح کم اور ڈالر نیچے آجائے گا، ہمیں لوگوں کو مچھلی کھانے کا نہیں پکڑنے کا طریقہ سکھانا چاہتے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں