The news is by your side.

Advertisement

19 سالہ طالبہ کیٹل فارم کی مالک

کراچی: مویشی پالنے کا کام عموماً مرد ہی کرتے دکھائی دیتے ہیں لیکن کراچی کی ایک 19 سالہ طالبہ پڑھنے کے ساتھ ساتھ اپنا فارم بھی چلا رہی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق 19 سالہ ثانیہ منیف نے اے آر وائی نیوز کے مارننگ شو باخبر سویرا میں شرکت کی اور اپنے گلابی بکروں کے بارے میں بتایا۔

ثانیہ نے بتایا کہ ان کے والد کو گھر میں پالتو جانور رکھنے کا شوق تھا، انہوں نے گھر میں گھوڑے، کتے اور سانپ وغیرہ پال رکھے تھے۔ انہیں بھی جانوروں کا شوق تھا اور آخر کار انہوں نے بکرے پالنے شروع کردیے۔

ثانیہ نے بتایا کہ گلابی بکرے، بکروں کی ایک قسم ہے جو دیگر بکروں سے مختلف ہوتی ہے، یہ اپنے مالک کو پہچانتی ہیں۔ علاوہ ازیں یہ مہنگے بھی ہوتے ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ اس وقت ان کے فارم پر 650 بکرے موجود ہیں جو کراچی لا کر فروخت کیے جانے ہیں، کچھ ان کے پالتو بکرے بھی ہیں جو ان کے ساتھ گھر میں رہتے ہیں۔

ثانیہ کے مطابق ان کے بکروں کی قیمت 50 ہزار سے شروع ہو کر 2 لاکھ تک جاتی ہے، 2 لاکھ روپے کا بکرا 3 سے 4 من کا نہایت بھاری بھرکم ہوتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ جانور پالنے کے لیے صرف سرمایہ کاری ہونا کافی نہیں بلکہ تھوڑا بہت تجربہ بھی ضروری ہے ورنہ نقصان ہوسکتا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں