The news is by your side.

Advertisement

نئے پاکستان والوں نے تعلیم کے لیے کچھ نہیں کیا، وزیرتعلیم سندھ

کراچی: وزیر تعلیم سندھ سرادرشاہ کا کہنا ہے کہ محکمہ تعلیم 104ارب روپے خسارے کا شکار ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیرتعلیم سندھ سراد شاہ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اسکولوں کے لیے فرنیچرخریدنے کے پیسے نہیں ہیں۔

صوبائی وزیر تعلیم نے کہا کہ وفاق کی جانب سے فنڈ نہیں ملتے، ملازمین کے لیے تنخواہیں نکالنا مشکل ہوگیا ہے، محکمہ تعلیم 104ارب روپے خسارے کا شکارہے۔

سراد شاہ نے مزید کہا کہ نئے پاکستان والوں نے تعلیم کے لیے کچھ نہیں کیا، نئی اسکمیں بنانا بھی انتہائی مشکل ہوگیا ہے۔

یاد رہے کہ رواں سال 19 فروری کو عالمی بینک نے محکمہ تعلیم سندھ میں کرپشن کے باعث صوبے میں تعلیم کے فروغ کے لیے جاری کئی منصوبوں پرفنڈنگ روک دی تھی۔

عالمی بینک نے رواں سال کے لیے ریفارم سپورٹ یونٹ کو بھی فنڈ دینے سے معذرت کرلی تھی، اساتذہ کے تربیتی پروگرام کی فنڈنگ جاری رکھی گئی ہے تاہم اس میں بھی کمی کردی گئی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں