The news is by your side.

Advertisement

سرگودھا میں 20 افراد کے قاتل جعلی پیر کا 14 روزہ ریمانڈ

سرگودھا: صوبہ پنجاب کے شہر سرگودھا میں 20 افراد کو موت کے گھاٹ اتارنے والے درندہ صفت جعلی پیر اور درگاہ کے متولی کو اس کے 3 ساتھیوں سمیت 14 روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق سرگودھا کے نواحی گاؤں میں درگاہ پر وحشیانہ انداز سے 20 افراد کو قتل کرنے والا مرکزی ملزم و جعلی پیر عبد الوحید کو اس کے 3 ساتھیوں سمیت جوڈیشنل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا گیا۔

مزید پڑھیں: مریدوں کو اللہ کے لیے قربان کیا، ملزم

متولی اور اس کے ساتھیوں کو انسداد دہشت گردی کی عدالت میں پیش کیا گیا۔ اس موقع پر پولیس نے عدالت میں نا مکمل چالان پیش کیا اور ملزمان کے جوڈیشل ریمانڈ کی استدعا کی جس پر عدالت نے چاروں ملزمان کو چودہ روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھجوا دیا۔

یاد رہے کہ 2 اپریل کو سرگودھا کے نواحی علاقے چک نمبر 95 شمالی میں درگاہ پر متولی عبد الوحید نے اپنے ساتھیوں کے ساتھ مل کر خواتین سمیت 20 افراد کو لاٹھی اور چاقوؤں کے وار سے قتل کردیا تھا۔

متولی نے اپنے ساتھیوں کے ساتھ مل کر مریدین کو نشہ آور شے پلائی اور انہیں بے ہوشی کی حالت میں بہیمانہ طریقے سے قتل کردیا۔

مزید پڑھیں: 2 مقتولین کے ورثا مدعی بننے کو تیار

حکام کے مطابق واقعہ خالصتاً ذاتی دشمنی کا شاخسانہ ہے۔ متولی نے درگاہ پر اپنا قبضہ جمائے رکھنے کے لیے لوگوں کو قتل کیا۔ وہ اس سے پہلے درگاہ کے سجادہ نشین کو بھی قتل کر چکا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں