The news is by your side.

Advertisement

پاکستان میں ہونےوالی دہشت گردی میں بھارت ملوث ہے، سرتاج عزیز

اسلام آباد : مشیر خارجہ سرتاج عزیز نے کہا ہے کہ بھارت پاکستان میں ہونے والی دہشتگردی میں بھارت ملوث ہے، بھارت مقبوضہ کشمیر کے عوام کو ان کا حق دینے کو تیار نہیں۔

اسلام آباد میں جنوبی ایشیاء میں امن اور تعاون کے موضوع پر سیمینار سے خطاب میں سرتاج عزیز کا کہنا تھا کہ بھارت پاکستان میں ہونےوالی دہشتگردی میں بھارت ملوث ہے، بھارت کی جانب سے ایل اوسی پر مسلسل جنگ بندی معاہدے کی جارہی ہے، سرحد پر بھاری ہتھیاروں کا استعمال کیا جارہا ہے ۔

سرتاج عزیز نے کہا کہ بھارت کی جانب سے طاقت کا استعمال تعلقات میں بگاڑ کا سبب ہے، سارک کانفرنس کے انعقاد میں رکاوٹ بن کر بھارت نے خطے میں امن و تعاون کی کوششوں کو نقصان پہنچایا ہے، باہمی اختلافات خطے کی ترقی اور استحکام کی راہ میں رکاوٹ ہیں، ایک دہائی سے عالمی امن متاثر ہوا ہے۔

پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں 70 ہزار سے زائد قربانیاں دی ہیں

انہوں نے کہا کہ جنوبی ایشیاء دنیا کے بہترین وسائل سے مالا مال اور اہم جغرافیائی محل وقوع کا حامل ہے، علاقائی تعاون کے بغیر ترقی اور خوشحالی ممکن نہیں، پاکستان اسٹریٹجک عدم توازن سے غافل نہیں رہ سکتا ۔ پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں 70 ہزار سے زائد قربانیاں دی ہیں، بھارت سیز فائر کی خلاف ورزیوں سمیت پاکستان میں دہشت گردی کو ہوا دینے میں ملوث رہا ہے، بھارت سی پیک پر اثرانداز ہورہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ کشمیر پاکستان اور بھارت کے مابین پرامن تعلقات میں سب سے بڑی مسئلہ ہے، بھارت کشمیر کے مسئلے پر پاکستان سے مزاکرات سے گریزاں اور کشمیریوں خو حق جودارادیت دینے کی بجائے ریاستی جبر کررہا ہے، بھارت اسلحہ کی دوڑ کو ہوا دے رہا ہے۔


مزید پڑھیں : بھارتی جارحیت خطے کے امن کیلئے خطرہ ہے، سرتاج عزیز


انہوں نے کہا کہ بھارت کی نیوکلئیر سپلائر گروپ میں شمولیت سے خطے میں طاقت کا توازن متاثر ہوگا۔

سرتاج عزیز نے کہا کہ بھارتی اقدامات دنیا کی ایک ارب سے زائد آبادی کے مستقبل کیلئے شدید خطرہ ہیں، پاکستان نے ہمیشہ خطے میں توازن رکھنے کی کاوشوں کی حمایت کی ہے۔

انکا کہنا تھا کہ 8 جولائی کے بعد سے بھارت مقبوضہ کشمیر میں بربریت میں مصروف ہے، ہمارے بھارت سے جب بھی مذاکرات ہوں گے ہم بھارت سے تمام تنازعات بالخصوص مسئلہ کشمیر کے حل کی بات کریں گے، ہم این ایس جی میں اپنی درخواست پر بالا امتیاز اور کرائٹریا کے مطابق غور کی بات کرتے ہیں وگرنہ خطے میں طاقت کا توازن بری طرح متاثر ہو سکتا ہے بدقسمتی سے بین الاقوامی برادری اس خطے کو درپیش چینلجز کو اس طرح نہیں سمجھ رہی جیسے سنجیدہ وہ ہیں۔

بھارت مقبوضہ کشمیرکے حالات کو دہشت گردی سے جوڑنے کی سازش کررہا ہے

مشیرخارجہ کا کہنا تھا بھارت مقبوضہ کشمیرکے حالات کو دہشت گردی سے جوڑنے کی سازش کررہا ہے، بھارت مقبوضہ وادی میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں کررہا ہے، عالمی برادری انسانی حقوق کی پامالی ختم کرانے کے لئے بھارت پردباؤ ڈالے، تنازعات کو حل کئے بغیرخطےمیں امن وتعاون ممکن نہیں

اس وقت کو کئی ایک اہم چیلنجز درپیش ہیں، خطے میں تعاون کے خواہاں ہیں، خطے میں آبادی میں مسلسل اضافہ وسائل کی کمی کا باعث بن رہا ہے۔ سرتاج عزیز نے کہا کہ جنوبی ایشیائی ریاستوں کے باہمی تنازعات خطے پر برے اثرات مرتب کر رہے ہیں۔

سرتاج عزیز پاکستان نے افغانستان میں قیام امن کیلئے کوششیں کیں، سارک کانفرنس کا انعقاد ایک ملک کے غیرذمہ دارانہ رویہ کے باعث نہ ہوسکا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں