The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب کا یمن کے لیے 50 کروڑ ڈالر امداد کا اعلان

ریاض: یمن میں جاری ملکی بحران سے نمٹنے کے لیے سعودی عرب کی جانب سے یمن کو انسانی بنیادوں پر پچاس کروڑ ڈالر امداد کا اعلان کیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق مغربی ایشیا میں واقع ملک یمن کو اس وقت سیاسی بحران سمیت مختلف چیلنجز کا سامنا ہے جس کے لیے سعودی عرب سمیت دیگر ملکوں کی جانب سے انسانی بنیادوں پر کروڑوں ڈالر عطیات کا اعلان کیا گیا ہے۔

اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل آنتو نیو گوتیریس نے جنیوا میں منعقدہ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سعودی عرب نے یمن کے لیے 50 کروڑ ڈالر جبکہ متحدہ عرب امارات نے 43 کروڑ ڈالر کا اعلان کیا ہے جو مجموعی طور پر 93 کروڑ ڈالر بنتے ہیں۔

یمن میں عرب اتحادی فضائیہ کی بمباری،14افرادہلاک

آنتو نیو گوتیریس کا کہنا تھا کہ یمن کو اس وقت شدید مالی ضروریات کا سامنا ہے جس کے لیے امداد کی مد میں مزید عطیات کی ضرورت ہے جبکہ اس حوالے سے کویت نے 25 کروڑ ڈالر اور پورپی یونین نے 10.7 کروڑ یورو دینے کا اعلان کیا ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ اس وقت ہمیں یمن کو شدید بحران سے نکالنا ہے جس کے لیے یہ اہم موقع ہے، دیگر ممالک کو بھی اس موقع سے فائدہ اٹھانا چاہیے، واضح کرنا چاہتے ہیں کہ اقوام متحدہ کی جانب سے یمن کے لیے خصوصی اقدامات کیے جارہے ہیں، جلد خصوصی ایلچی یمن بھیجے جائیں گے۔

ایران کا سعودی عرب پریمن میں ایرانی سفارتخانے پر بمباری کا الزام

یاد رہے کہ اقوام متحدہ نے یمن میں انسانی ضروریات کو پورا کرنے اور مالی امداد کی مد میں 3 ارب ڈالر کے عطیات کا مطالبہ کر رکھا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں