The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب: غیرملکیوں کے لیے ایک اور بری خبر!

ریاض: سعودی عرب میں ملازمت کے مزید دروازے تارکین وطن کے لیے بند کردیے گئے ہیں۔

عرب میڈیا کی رپورٹ کے مطابق مملکت کے چھے سرکاری اداروں میں آپریشنل سیکٹر کی سعودائزیشن کا آغاز کیا گیا ہے، جس کے تحت مذکورہ سیکٹر میں غیرملکی کام نہیں کریں گے۔

رپورٹ میں بتایا گیا کہ سرکاری اداروں میں ضرورت کا سامان خریدنے کے لیے ورکنگ ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔

ورکنگ ٹیموں کو ٹارگٹ دیا گیا ہے کہ وہ ملکی ساختہ سامان کو ترجیح دیں، مقامی صنعتوں کو فروغ دینے کے لیے اقدامات کریں۔ سعودائزیشن کے ذریعے مقامیوں کو ملازمتیں دی جائیں گی۔

سعودی وزیر صنعت و معدنیات بندر الخریف کا کہنا تھا کہ مقامی اشیا کے استعمال پر توجہ مرکوز کرنے سے تمام اقتصادی طبقوں کا فائدہ ہوگا۔

انہوں نے مزید کہا کہ گزشتہ سالوں کے دوران اس حوالے سے اصلاحات کے متعدد شاہی فرامین جاری ہوچکے ہیں جن میں کہا گیا ہے کہ مقامی ساختہ اشیا کو ترجیح دی جائے اور قومی معیشت میں ان کا حصہ بڑھایا جائے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں