The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب: ملازمین ہوجائیں ہوشیار!

ریاض: سعودی قانون مشیروں نے کمپنیوں کو ہدایت کی ہے کہ وہ اپنے ایسے ملازمین کے خلاف کارروائی کریں جو انتہا پسند تنظیموں کو سوشل میڈیا پر فالو کرتے ہیں۔

عرب میڈیا کی رپورٹ کے مطابق سعودی عرب میں قانونی مشیروں نے خبردار کیا ہے کہ انتہا پسند تنظیموں اور منحرف افکار کے حامل افراد کے اکاؤنٹ کو فالو کرنا جرم ہے جس پر سخت سزا بھی مقرر ہے۔

مشیروں نے متنبہ کیا ہے کہ دہشت گرد یا تنظیموں کے علاوہ منحرف افکار کے حامل افراد کے اکاؤنٹ دیکھنا بھی جرم ہے، ایسی صورت میں بھی ایکشن لیا جائے گا۔

ان کا کہنا ہے کہ انتہا پسند تنظیموں اور منحرف افکار کے حامل افراد کو فالو کرنے پر 8 سال قید کی سزا ہوسکتی ہے، سرکاری اداروں اور نجی کمپنیوں کو اختیار ہے کہ وہ انتہا پسند تنظیموں اور منحرف افکار کے حامل افراد کو فالو کرنے پر اپنے ملازمین کا احتساب کریں تاکہ انہیں سزا دلائی جاسکے۔

خیال رہے کہ سعودی قوانین کے تحت ہر اس شخص کو زیادہ سے زیادہ 8 سال اور کم سے کم سے 3 سال قید کی سزا ہوگی جس نے دہشت گرد تنظیم کی تائید کی یا دہشت گردانہ عمل کی حمایت کی۔

مذکورہ بالا صورت میں ہمدردی کا اظہار کرنا بھی دہشت گردی تصور کیا جائے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں