سعودی عرب:‌ تین پاکستانیوں کا سر قلم Saudia Arabia Three Pakistani
The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب:‌ تین پاکستانیوں کا سر قلم

ریاض: سعودی حکومت نے ہیروئن اسمگلنگ کا الزام ثابت ہونے پر تین پاکستانیوں کا سرقلم کردیا۔

عرب نیوز ایجنسی کے مطابق ہیروئن اسمگل کرنے والے افراد پر جرم ثابت ہونے کے بعد انہیں اتوار کے روز سزا موت دی گئی، سزا پانے والے تینوں پاکستانیوں کی شناخت محمد اشرف ولد شفیع محمد، محمد عارف ولد عنایت اور محمد افضل ولد اصغر علی کے نام سے ہوئی۔

عرب خبر رساں ادارے کے مطابق رواں سال کے چار ماہ میں اب تک 26 افراد کو سزائے موت دی جاچکی ہے تاہم 153 سے زائد افراد جیلوں میں بھی موجود ہیں۔

پڑھیں: ’’ سعودی عرب: منشیات فروشی پر پاکستانی اور سعودی شہری کا سر قلم ‘‘

انسانی حقوق کی علمبردار تنظیم ایمنسٹی انٹرنیشنل نے سعودی جیلوں میں موجود قیدیوں کے حوالے سے تشویش کا اظہار بھی کیا ہے تاہم ایمنسٹی کے ترجمان کا کہنا ہے کہ سزائے موت انسانی حقوق کی سخت خلاف ورزی ہے۔

یاد رہے سعودی عرب میں بادشاہی نظام کے تحت سخت قوانین رائج ہیں، چور ی کا جرم ثابت ہونے پر ہاتھ کاٹنے کی سزا جبکہ ہیروئن اسمگلنگ کا جرم ثابت ہونے پر سزائے موت دی جاتی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں