The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب کا پہلا پاسپورٹ کیسا تھا؟ تصویر وائرل

ریاض : سعودی عرب کے قدیم پاسپورٹ کی تصویر سوشل میڈیا پر وائرل ہورہی ہے۔ جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ پاسپورٹ ہولڈر کی شہریت نجدی لکھی ہوئی ہے۔

سعودی ذرائع ابلاغ کے مطابق سماجی رابطوں کی ویب سائٹس پر سعودی عرب میں سب سے پہلے جاری ہونے والے پاسپورٹ کی تصویر پوسٹ کی گئی ہے جس پر صارفین اپنی پسندیدگی کا اظہار کررہے ہیں۔

مملکت سعودی عرب میں پہلا پاسپورٹ مملکت کے مختلف علاقوں کا اتحاد بننے سے قبل جاری ہوا تھا۔ یہ پاسپورٹ ریاست حجاز و سلطنت نجد اور  ملحق ریاستوں کے نام سے جاری ہوا تھا۔

پاسپورٹ ہولڈر کی شہریت نجدی لکھی ہوئی ہے۔ یہ مملکت سعودی عرب کے قیام کے اعلان سے چھ برس قبل 1345 ہجری مطابق 1926 میں جاری ہوا تھا۔

تاریخ داں بتاتے ہیں کہ جدید پاسپورٹ نما پہلی دستاویز انگلینڈ کے فرمانروا ہینری پنجم نے 1404 میں جاری کی تھی جبکہ 1794میں دفتر خارجہ کے عہدیداروں کو پاسپورٹ کے اجراء کی ذمہ داری تفویض کی گئی تھی۔

برطانیہ کا قدیم ترین پاسپورٹ 1636 میں جاری ہوا تھا، انگلینڈ کے فرمانروا چارلس اول نے سال مذکور کے دوران سر تھامس لٹلٹن کو سمندر پار علاقوں کے سفر کے لیے پاسپورٹ دیا تھا۔

پہلی عالمی جنگ کے خاتمے پر1914 میں پاسپورٹ کا استعمال کثرت سے کیا جانے لگا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں