The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب کی الحائر جیل میں قیدی رشتہ ازدواج میں‌ منسلک

ریاض: سعودی عرب کی الحائر جیل میں ایک قیدی شادی کے بندھن میں بندھ گیا، شادی کی تقریب کے تمام تر انتظامات جیل انتظامیہ نے انجام دئیے۔

عرب میڈیا کے مطابق سعودی عرب کی جیل میں قید ایک قیدی کی شادی جیل حکام کی جانب سے دھوم دھام سے کرادی گئی، تقریب میں پولیس اہلکاروں سمیت قیدی کے قریبی رشتے داروں نے بھی شرکت کی، شادی کے تمام اتر انتظامات جیل انتظامیہ نے بخوبی انجام دئیے۔

تقریب کے اختتام پردولہا دلہن کو نقدی کے علاوہ تحفے تحائف بھی پیش کیے گئے تھے، ریاستی سلامتی کے ادارے نے شادی کی تقریب کی تصاویر بھی جاری کیں۔

جیل انتظامیہ کے مطابق قیدی کو اپنی نوبیہاتا دلہن کے ساتھ مہینے میں ایک بار تین سے پانچ گھنٹے ملاقات کا موقع بھی مل سکے گا۔

مزید پڑھیں: میکسیکو کی جیل میں 63 قیدی رشتہ ازدواج میں منسلک

سعودی عرب میں زیادہ تر افراد کی جانب سے جیل انتظامیہ کے اس اقدام کو سراہا گیا ہے جبکہ کچھ لوگوں کی جانب سے اس پر تنقید کی گئی ہے۔

قبل ازیں مارچ 2016 میں بھی ایک اور قیدی کی اسی طرح کی شادی کی تقریب منعقد ہوئی تھی جس میں جیل انتظامیہ کی طرف سے تمام انتظامات کیے گئے تھے، دولہا قیدی کو اس وقت کے ولی عہد اور وزیر داخلہ شہزادہ محمد بن تائف کی طرف سے نقد رقم کے علاوہ تحائف بھی دئیے گئے تھے۔

یاد رہے کہ ریاض کی مرکزی جیل کا نام الحائر جیل ہے یہ ریاض شہر سے 29 کلو میٹر دور واقع ہے، اس کا افتتاح 1983 میں ہوا تھا، حکومت اسے جیل کے بجائے اصلاحیہ کا نام دیتی ہے، اصلاحیہ سے مراد وہ مقام جہاں منحرف لوگوں کی اصلاح کی جاتی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں