The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب: معمر افراد کے ساتھ بدسلوکی پر بھاری جرمانہ اور سزا

ریاض: سعودی عرب میں معمر افراد کے ساتھ بدسلوکی جرم ہے جس پر بھاری جرمانہ اور سزا مقرر کی گئی ہے، اس حوالے سے پبلک پراسیکیوشن نے تنبیہہ جاری کی ہے۔

سعودی ویب سائٹ کے مطابق سعودی پبلک پراسیکیوشن نے کہا ہے کہ معمر افراد کے ساتھ بدسلوکی قابل سزا جرم ہے جس کی سزا ایک سال قید اور 5 لاکھ ریال جرمانہ ہے۔

پبلک پراسیکیوشن نے توجہ دلائی کہ سعودی عرب میں معمر افراد کے حقوق اور ان کی نگہداشت کا قانون نافذ ہے، معمر افراد کی حق تلفی پر سزا بھی مقرر ہے۔

پبلک پراسیکیوشن نے معمر افراد کے عالمی دن کے موقع پر اپنے ٹویٹ میں کہا تھا کہ جو شخص بھی کسی بوڑھے کے ساتھ بدسلوکی کرے گا اسے بوڑھوں کے حقوق کے قانون کی دفعہ 3 کے تحت سزا ملے گی۔

قانون میں ہے کہ بزرگ افراد کو اپنے اہل خانہ کے ساتھ رہنے کا حق ہے، خاندان کی ذمہ داری ہے کہ گھر کے بزرگ کی رہائش کا اہتمام کرے اور ان کی دیکھ بھال بھی کی جائے، اہلخانہ کو اپنی ذمہ داری نہ نبھانے پر سزا ہوگی۔

پبلک پراسیکیوشن نے توجہ دلائی کہ قانون کی دفعہ 15 میں ہے کہ خاندان کے بزرگ کی دولت کو ان کی مرضی کے بغیر خرچ کرنا منع ہے۔

معمرافراد کے حقوق کا خیال نہ کرنا اور حق تلفی کرنا قابل سزا عمل ہے، جو شخص کسی بزرگ کے ساتھ بدسلوکی کا مرتکب ہوگا اسے 1 برس تک قید اور 5 لاکھ ریال تک جرمانے کی سزا ہوگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں