The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب کا دہشت گردی کے خلاف جنگ جاری رکھنے کا عزم

واشنگٹن: سعودی وزیربرائے خارجہ عادل الجبیر کا کہنا ہے کہ سعودی عرب دہشت گردی کے خلاف جنگ جاری رکھے گا۔

تفصیلات کے مطابق امریکی دارالحکومت واشنگٹن میں دہشت گردی کے خلاف بین الاقوامی اتحادی ممالک کے وزرائے خارجہ کا اجلاس ہوا جس میں عادل الجبیر نے بھی خطاب کیا۔

اس موقع پر انہوں نے کہا کہ سعودی عرب دہشت گردی کے خاتمے کے لے بین الاقوامی اتحاد کے ساتھ مل کر ہرممکن اقدامات کرے گا۔

وزیر خارجہ کہ کہنا تھا کہ دہشت گردی کے خاتمے کے لیے ضروری ہے ان کی فنڈنگ بھی روکی جائے، دہشت گردوں کو فنڈ دینا عالمی قوانین کی خلاف ورزی ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ سعودی حکومت اُن تمام بین الاقوامی اور علاقائی کوششوں کو سپورٹ کرنے کا عزم کرتی ہے جن کا مقصد دہشت گرد تنظیموں کا خاتمہ اور خطے کو عدم استحکام کے  لیے کوشاں ہیں۔

سعودی عرب شام سے غیرملکی افواج کے انخلا کا حامی

دہشت گردی کے خاتمے کے لیے یہ بین الاقوامی اتحاد ستمبر 2014 میں بنایا گیا جس کے 79 ممالک حصہ ہیں اور سعودی سعودی عرب کا اتحاد میں مرکزی کردار رہا ہے۔

اتحاد کا دعویٰ ہے کہ اس نے داعش کا 99 فیصد خاتمہ کردیا ہے تاہم دنیا بھر میں اب بھی شدت پسند تنظیم سے خطرات لاحق ہیں۔

خیال رہے کہ سعودی وزیر برائے خارجہ عادل الجبیر نے واشنگٹن میں منعقد اجلاس کے ضمن میں پولینڈ، سویڈن، فرانس، جرمنی، ہالینڈ، ڈنمارک، یوکرین، فن لینڈ، آئرلینڈ اور عراق کے وزراء خارجہ سے بھی ملاقاتیں کیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں