site
stats
عالمی خبریں

شیخ یہ عبایہ کیسا ہے؟ سعودی عالم دین کے بیان پر خواتین برہم

ریاض: سعودی عرب میں ایک عالم دین کو خواتین نے تنقید کا نشانہ بنایا ہے جنہوں نے کہا تھا کہ خواتین کو ڈیزائن والا عبایہ اور میک سے گریز کرنا چاہیے۔

بی بی سی کے مطابق سعودی عالم دین محمد الرافع نے ٹوئٹر پر کہا تھا کہ اے میری بیٹی، ایسا عبایہ مت خریدو جس پر کوئی آرائش ہو، کوئی سجاوٹ یا کڑھائی ہو یا کوئی چاک ہو، براہ مہربانی بیٹی کوئی میک اپ نہ ظاہر کرو اور (اسلام سے قبل) زمانہِ جہالت جیسا میک اپ نہ کرو۔‘‘

جواب میں خواتین نے انہیں کافی تنقید کا نشانہ بنایا، کچھ خواتین نے ان کے ٹوئٹر اکاؤنٹ پر اپنی تصاویر شیئر کیں جس میں وہ اپنا عبایہ دکھا رہی ہیں اور طنزیہ پوچھ رہی ہیں کہ شیخ، کیا ہم یہ عبایہ استعمال کرسکتے ہیں؟

ایک خاتون نے ٹوئٹ میں اپنا عبایہ دکھایا اور استفسار کیا کہ میرا عبایہ کیسا ہے؟ آئندہ کوشش کروں گی کہ رنگ برنگے عبایے خریدوں اور ایسے عبایے جو اسلام سے قبل بھی نہیں پہنے گئے۔

ایک اور خاتون نے ٹوئٹ کیا کہ میں اپنے انتہائی خوبصورت عبایے دکھانا چاہوں گی۔

ایک اور صارف نے پوچھا کہ میں اپنے عبایہ پر انتہائی شوخ آرائش کر رہی تھی تو کیا یہ ٹھیک ہے؟

ایک خاتون نے تو عالم دین کی تصویر فوٹو شاپ کرکے انہیں عبایا پہنادیا اور تصاویر انہیں ٹوئٹ کردیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top