The news is by your side.

Advertisement

مرد اورخواتین میں کوئی فرق نہیں ، سعودی شہزادہ محمدبن سلمان

واشنگٹن : سعودی ولی عہد شہزادہ محمدبن سلمان کا کہنا ہے کہ مرد اورخواتین میں کوئی فرق نہیں، سعودی خواتین ورکرز کو مردوں کے برابر تنخواہیں دی جائیں گی۔

تفصیلات کے مطابق سعودی ولی عہد محمد بن سلمان امریکا کے دورے پر پہنچ گئے، امریکی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے سعودی شہزادہ محمد بن سلمان نے کہا کہ ہم سب انسان ہیں اورخواتین اورمردوں میں کوئی فرق نہیں، سعودی عرب میں خواتین ورکرز کو مردوں کے برابرتنخواہ دی جائیں گی۔

سعودی شہزادہ کا کہنا تھا کہ ہمارے درمیان کچھ انتہا پسند غلط خیالات پھیلا رہے ہیں، موجودہ سعودی عرب وہ نہیں جو حقیقت میں ہے، حقیقی سعودی عرب ستر اوراسی کی دہائی کا ہے، جب سعودی خواتین ڈرائیونگ کرتی تھیں اور ملک میں سینما گھر بھی تھے۔

ولی عہد محمد بن سلمان نے کہا کہ سعودی عرب میں خواتین کے حقوق اور آزادی نسواں کے لیے کئی اہم اقدامات کیے ہیں، سعودی خواتین کھیلوں کی سرگرمیوں میں حصہ لے سکتی ہیں، خواتین کاروبار کرسکتی ہیں اور فوج میں بھی بھرتی ہوسکتی ہیں۔

شہزادہ محمدبن سلمان کا کہنا تھا کہ مرد اور عورت برابر ہیں، خواتین کے لئے کالا عبایہ اور سر پر کالا دوپٹہ ضروری نہیں، یہ فیصلہ خواتین مکمل طور پر خواتین کے اوپر چھوڑ دیا گیا ہے کہ وہ کس قسم کے مہذب لباس پہننے کا انتخاب کرے لیکن یہ ہم ہیں جنہوں نے کالا عبایہ لازم کررکھا ہے ورنہ شریعی قوانین میں اس کی صراحت نہیں۔

انھوں نے مزید کہا شریعی قوانین میں واضح طور پرعورت کو آزادی دے رکھی ہے کہ وہ اپنی مرضی سے مناسب لباس پہنے۔

سعودی شہزادہ کا کہنا تھا کرپشن کیخلاف مہم میں ایک کھرب ڈالرحاصل کئے، مہم کا مقصد رقم جمع کرنا نہیں بلکہ انہیں سزا دینی تھی اور یہ کارروائی بہت ضروری تھی جس سے کرپشن کا انسداد ممکن ہوگا، اسامہ بن لادن نے سعودی عرب کے امیج کونقصان پہنچایا۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں