The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب: خاتون کی ڈرائیونگ سے خائف نوجوانوں نے گاڑی کو آگ لگادی

مکہ: سعودی عرب میں حکومت کی اجازت کے باوجود نوجوانوں نے ایک خاتون کو گاڑی چلانے پر دھمکیاں دیں اور خاتون کی گاڑی ہی جلا ڈالی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق سعودی عرب میں گزشتہ ماہ سعودی حکومت کی جانب سے خواتین کو ڈرائیونگ کی اجازت دی گئی تھی اور خواتین کی جانب سے اس اقدام کو بے حد سراہا بھی جارہا ہے لیکن کچھ نوجوان اس سے خائف نظر آئے اور خاتون کی گاڑی کو جلا دیا۔

ایک سعودی خاتون کا کہنا ہے کہ چند نوجوان انہیں حکومتی اجازت کے باوجود انہیں گاڑی چلانے کے حق سے محروم رکھ رہے ہیں اس اقدام سے یہ ظاہر ہوتا ہے کہ سعودی خواتین کی مشکلات ابھی کم نہیں ہوئی ہیں چند لوگ خواتین کو آزادی دینے کے اقدامات کی راہ میں رکاوٹ بن رہے ہیں۔

سعودی عرب کے شہر مکہ کی 33 سالہ رہائشی خاتون کے مطابق نوجوانوں کا کہنا ہے کہ خواتین کو گاڑی نہیں چلانی چاہئے، دوسری جانب یہ واقعہ سوشل میڈیا پر وائرل ہوگیا ہے جسے شہریوں کی جانب سے دہشت گردی کا واقعہ قرار دیا جارہا ہے۔

عرب میڈیا رپورٹس کے مطابق خواتین کو دھمکیاں دینے اور گاڑی جلانے والے دو افراد کو حراست میں لے کر نامعلوم مقام پرمنتقل کردیا گیا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔ 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں