The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب: نیا ٹریفک قانون نافذ

ریاض: سعودی وزارتِ داخلہ نے ٹریفک کے نئے قوانین نافذ کرنے کا سرکلر جاری کردیا جس پر عمل درآمد تین جنوری سے شروع کردیا گیا۔

عرب میڈیا رپورٹ کے مطابق ٹریفک کے نافذ ہونے والے نئے قانون کے مطابق اگر ڈرائیور نے تین سال کے دوران ٹریفک کی خلاف ورزیاں کر کے 90 پوائنٹس کم کرلیے تو اُس کا لائسنس ضبط کرلیا جائے گا۔

سرکاری گزٹ ’ام القریٰ‘ میں واضح کیا گیا ہے کہ گزشتہ تین سال کے پوائنٹس کو مدنظر رکھتے ہوئے انہیں آج سے گنا جائے گا۔ اسی طرح اگر کسی ڈرائیور سے ایک سال کے دوران ٹریفک کا کوئی بڑا حادثہ پیش آیا یا اس کا خطرہ ہوا تو ایسے شخص کو دوسری بار کوئی چھوٹ نہیں دی جائے گی۔

مزید پڑھیں: سعودی عرب میں پاکستانی ڈرائیور کا عظیم کارنامہ

سرکاری گزٹ میں بتایا گیا ہے کہ دوسری بار خلاف ورزی کرنے والے شخص پر بھاری جرمانہ عائد کیا جائے گا جبکہ تیسری بار سنگین غلطی کرنے والے ڈرائیور کا مقدمہ عدالت میں چلایا جائے گا۔

رپورٹ کے مطابق عدالت میں مقدمہ جانے کے بعد ڈرائیور کو اپنی صفائی پیش کرنے کی مکمل اجازت ہوگی اور اگر وہ قصور وار پایا گیا تو اُسے ایک سال قید کی سزا بھی سنائی جاسکتی ہے۔

سعودی عرب کے محکمہ ٹریفک نے عوام کو خبرادار کیا ہے کہ وہ ٹریفک کے حوالے سے لاحق خطران کی خلاف ورزیاں نہ کریں، 9 ایسے کام ہیں جن سے ہر صورت اجتناب کرنا ہے بصورت دیگر قانون کی خلاف ورزی ہوگی۔

یہ بھی پڑھیں: سعودی عرب میں مساجد کے اطراف غلط پارکنگ پر بھاری جرمانہ

محکمہ ٹریفک کی جانب سے واضح طور پر بتایا گیا ہے کہ حد سے زیادہ رفتار سے گاڑی ڈرائیو کرنا، نشے کی حالت میں گاڑی چلانا، سگنل توڑنا، اسپیڈ میں اوو ٹیک کرنا اور غلط سمت (رانگ وے) گاڑی چلانا سنگین جرائم ہیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں