The news is by your side.

Advertisement

فیفا ورلڈ کپ: روس کے ہاتھوں شکست، سعودی کھلاڑیوں کو سزا کا اعلان

جدہ: فیفا ورلڈکپ 2018 کے افتتاحی میچ میں روسی ٹیم کے ہاتھوں عبرتناک شکست کے بعد سعودی فٹبال فیڈریشن نے کھلاڑیوں کو سزا دینے کا اعلان کردیا۔

تفصیلات کے مطابق 15 جون کو فیفا ورلڈ کپ 2018 کی رنگا رنگ افتتاحی تقریب کے روس اور سعودی عرب کی ٹیموں کے مابین ایونٹ کا پہلا مقابلہ ہوا جس میں عرب ٹیم کو عبرت ناک شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

میچ کی ابتدا ہی سے روسی ٹیم غالب رہی اور انہوں نے پے در پے حملے کر کے سعودی فٹبالرز کی دفاعی لائن کو تہس نہس کر دیا تھا۔ 12 ویں منٹ میں غازینسکی نے روس کی جانب سے پہلا گول کیا بعد ازاں دوسرا گول چیری شیف نے کیا جبکہ دوسرے ہاف میں زیوبا، چیری شیف اور گولوون نے آخری دو منٹ کے اندر شان دار گول اسکور کرکے مہمان ٹیم کی جیت پر تصدیق کی مہر ثبت کر دی تھی۔

روس کے ہاتھوں شکست کے بعد جہاں سعودی عوام اپنی ٹیم سے شدید مایوس ہیں اور انہوں نے کھلاڑیوں کو سزا دینے کا مطالبہ کیا تو دوسری جانب سعودی فٹبال فیڈریشن کے سربراہ عادل عزت نے کھلاڑیوں کو سزا دینے کا اعلان کردیا۔

غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق عادل عزت کا کہنا تھا کہ سعودی ٹیم کی روس کے ہاتھوں شکست نہایت مایوس کُن ہے کیونکہ ہم نے میگا ایونٹ کے لیے بہت پہلے سے تیاری شروع کردی تھی اور فیڈریشن نے کھلاڑیوں کو بہترین سہولیات کے ساتھ اچھی تربیت بھی فراہم کی۔

اُن کا کہنا تھاکہ ہماری ٹیم کے کھلاڑیوں کسی بھی گراؤنڈ میں اترنے کے بعد اپنے اعصاب پر قابو پانا ہوگا، ایونٹ کے آئندہ میچز میں سعودی کھلاڑی اچھی کارکردگی پیش کریں اس کے لیے انہیں سزا دینا ضروری ہے۔

سعودی فیڈریشن کے سربراہ نے گول کپیر عبد اللہ المایوف، اسٹرائیکر محمد السہلاوی اور دفاعی کھلاڑی عمر ہوساوی کو خاص طور پر سزا دینے کا اعلان کیا، پوری ٹیم کو وطن واپسی کے بعد قانون کے مطابق سزا بھگتنا ہوگی۔

فٹبال بورڈ کی جانب سے ابھی تک واضع نہیں کیا گیا کہ ٹیم یا ناقص کارکردگی دکھانے والے کھلاڑیوں کو کس قسم کی سزائیں سنائی جائیں گی۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں