The news is by your side.

Advertisement

جلال آباد میں خود کش حملہ‘ فائرنگ‘ 11 افراد زخمی

جلال آباد: افغانستان کے شہر جلال آباد میں خود کش بمبار نے کار بم حملہ کیا ہے جس میں اب تک کی اطلاعات کےمطابق 11 افراد زخمی ہوئے ہیں جنہیں مختلف اسپتالوں میں منتقل کیا جارہا ہے۔

فرانسیسی خبر رساں ادارے ( اے ایف پی ) اور افغانستان کے مقامی میڈیا کے مطابق یہ حملہ شمالی شہر جلال آباد میں واقع ایک بین الاقوامی این جی او کے دفتر پر کیا گیا ہے۔

مقامی ذرائع کا کہنا ہے کہ آج بروز بدھ ’سیو دی چلڈرن‘ نامی این جی او کے دفتر پر ہونے والے دھماکے کی زوردار آواز سنی گئی ‘ دھماکہ عمارت کے کمپاؤنڈ میں کیا گیا تھا۔ جس کےبعد مسلح حملہ آور احاطے میں داخل ہوگئے۔

یاد رہے کہ مذکورہ تنظیم ایک طویل عرصے سے افغانستان میں کام کررہی ہے جسے اس حملے میں نشانہ بنایا گیا ہے‘ افغان صوبے ننگرہار کے گورنر کے ترجمان عطا اللہ خوگیانی کا کہنا ہے کہ صبح نو بج کر دس منٹ پر دھماکہ ہوا، دھماکے کے بعد مسلح افراد نے کارروائی شروع کی جس کے نتیجے میں اب تک 11 زخمی افراد کو مختلف اسپتالوں میں منتقل کیا جاچکا ہے۔

محمد امین نامی ایک زخمی نے ‘ جو کہ حملے کے عینی شاہد ہیں ۔ ان کا کہنا تھا کہ’’ ایک زوردار دھماکے کی آواز گونجی جس کے بعد سب چھپنے کے لیے بھاگے‘ میں نے دیکھا کہ ایک حملہ آور راکٹ لانچر سے فائر ہونے والے گرنیڈ کی مدد سے مرکزی دروازے کو نشانہ بنا رہا ہے۔ میں نے کھڑکی سے چھلانگ لگا کر اپنی جان بچائی‘‘۔

کابل ہوٹل پر حملہ


خیال رہے کہ تین روز قبل افغانستان کے دارالحکومت کابل میں مسلح افراد کے ہوٹل پرحملے میں 5 افراد ہلاک اور 6 زخمی ہوگئے تھے جبکہ سیکورٹی فورسز کی جوابی کارروائی میں 3 حملہ آور بھی مارے گئے تھے۔

افغان میڈیا کے مطابق عینی شاہدین کا کہنا تھا کہ انہوں نے مسلح افراد کو کابل کے علاقے باغِ بالا میں واقع ہوٹل کے اندر رات 9 بجکر 20 منٹ پرداخل ہوتے ہوئے دیکھا گیا تھا۔افغان سیکورٹی حکام کے مطابق حملہ آوروں کے خلاف 10 گھنٹے سے زائد جاری رہنے والا آپریشن سیکورٹی فورسز نے آج صبح 10 بجے مکمل کیا۔

کابل کے اس ہوٹل میں آج انفارمیشن ٹیکنالوجی کانفرنس کا انعقاد ہونا تھا جبکہ حملے کے وقت ہوٹل میں 100 سے زائد آئی ٹی مینیجرزاور انجیئنرز موجود تھے۔دو روز قبل کابل میں امریکی سفارت خانے نے الرٹ جاری کیا تھا کہ دہشت گرد کابل میں معروف ہوٹلز کو نشانہ بناسکتے ہیں۔

یاد رہے کہ اس سے قبل بھی یہ ہوٹل ایک مرتبہ دہشت گردوں کے نشانے پرآچکا ہے۔ 28 جون 2011 کو اسی ہوٹل میں خودکش بمبار نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا تھا جس کے نتیجے میں 21 افراد ہلاک ہوئے تھے۔


یہ ابتدائی خبر ہے جییسے ہی مزید تفصیلات موصول ہوں گی اس خبر کو اپ ڈیٹ کیا جائے گا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں