The news is by your side.

Advertisement

کراچی میں 556 عمارتیں خطرناک قرار

کراچی : ایس بی سی اے نے کراچی سمیت سندھ بھرمیں689 عمارتوں کومخدوش قرار دے دیا ، جس میں صرف کراچی میں سب سے زیادہ 556 عمارتیں خطرناک ہیں۔

ایس بی سی اے ایک بار پھر مون سون بارشون سے قبل مخدوش عمارتوں کی فہرست جاری کرکے بری الذمہ ہوگئی اور پہلی بار کراچی کے علاوہ سکھر ، حیدر آباد، لاڑکانہ اور میرپور خاص کی بھی مخدوش عمارتوں کی فہرست جاری کردی ہے۔

فہرست میں کراچی سمیت سندھ بھر میں چھ سو نواسی عمارتوں کو مخدوش قرار دیا گیا ہے ، ایس بی سی اے کا کہنا ہے کہ کراچی میں زیادہ 556عمارتیں خطرناک قرار دی گئی ہے۔

ایس بی سی اے کے مطابق میرپور خاص میں 42عمارتیں اور مکان مخدوش ہیں جبکہ حیدر آباد میں 40عمارتیں خطرناک قرار دی گئی ہے۔

فہرست میں ضلع جنوبی میں سب سے زیادہ ایک سو دو عمارتیں خطرناک ہیں جبکہ آرام باغ کے علاقے میں اکتالیس عمارتیں ، کلفٹن میں نو ، سول لائن میں تین رنچھوڑ لائن میں بیالیس ، کورنگی میں انیس ، شاہ فیصل میں نو ، آرٹلری میدان میں گیارہ جبکہ ضلع غربی میں ایک عمارت مخدوش قرار دی گئی ہے۔

ایس بی سی اے کا کہنا ہے کہ خطرناک عمارتوں کی فہرست میں بائیس سے زائد ہیری ٹیج عمارتیں شامل ہیں تاہم مخدوش عمارتوں کے مکینوں کو فوری رہائش خالی کرنے کا حکم دے دیا گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں