The news is by your side.

Advertisement

کراچی، عمارت گر گئی، ایس بی سی اے کی رشوت خوری بے نقاب

کراچی: کراچی میں عمارت گرنے سے 11 افراد جاں بحق اور 35 زخمی ہوگئے اور ایس بی سی اے کی رشوت خوری کا دھندا بے نقاب کردیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی مال کماؤ محکمہ بن گئی، اے آر وائی نیوز کی ٹیم سرعام نے افسران کی ملی بھگت اور رشوت خوری کا مکروہ دھندا بے نقاب کردیا۔

کراچی میں عمارتیں منہدم ہورہی ہیں، ایس بی سی اے کے راشی اہلکاروں کو روکنے والا کوئی نہیں، پیسے لے کر غیرقانونی تعمیرات کی اجازت معمول بن چکی ہے۔

اے آر وائی نیوز کے اینکر پرسن اقرار الحسن اور ٹیم سرعام نے ایس بی سی اے اہلکار کو رشوت لیتے دکھا دیا۔

دوسری جانب ایڈیشنل ڈی جی ایس بی سی اے آشکار داوڑ نے اعتراف کیا کہ بلڈنگ کنٹرول ادارے کی چشم پوشی اور غفلت ہے کہ غیرقانونی عمارتیں بن رہی ہیں۔

آشکار داوڑ کا کہنا تھا کہ غیرقانونی عمارتیں تعمیر کرنے والے بھی مجرم ہیں، دونوں کو سزا ملنی چاہئے، ہمارے پاس غیرقانونی تعمیرات پر موثر کارروائی کرنے کے لیے وسائل موجود نہیں ہیں۔

مزید پڑھیں: وزیراعلیٰ سندھ کا ایس بی سی اے کے 28 افسران کوگرفتار کرنے کاحکم

واضح رہے کہ کراچی کے علاقے گولیمار رضویہ سوسائٹی میں رہائشی عمارت گرنے کے نتیجے میں 11 افراد جاں بحق اور 35 زخمی ہوگئے ہیں جبکہ ملبے تلے مزید افراد کے دبے ہونے کی اطلاعات ہیں۔

جائے وقوعہ پر ریسکیو ٹیموں کے ہمراہ رینجرز اور آرمی کی ٹیمیں بھی مصروف ہیں جبکہ تنگ گلیوں کے سبب امدادی کارروائیوں میں دشواریوں کا سامنا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں