The news is by your side.

Advertisement

اسٹیٹ بینک آئندہ 2ماہ کے لیے مانیٹری پالیسی کا اعلان آج کرے گا

کراچی : اسٹیٹ بینک کی جانب سے شرح سود میں ردوبدل کا اعلان آج ستمبر کو کیا جائے گا، ماہرین کے مطابق شرح سود میں کمی کا امکان ہے، اس وقت بنیادی شرح سود 13.25 فیصد ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسٹیٹ بینک نے مانیٹری پالیسی کمیٹی کا اجلاس آج ہوگا، مانیٹری پالیسی کمیٹی کے اجلاس کی صدارت گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر کریں گے، جس میں آئندہ دو ماہ کے لئے بنیادی شرح سود کا تعین کیا جائے گا۔

جس کے بعد اسٹیٹ بینک کی جانب سے آئندہ دو ماہ کیلئے شرح سود کا اعلان آج کیا جائے گا، بینک شرح سود میں ردوبدل کےفیصلہ کیلئے پریس ریلز جاری کرے گا.

معاشی ماہرین کا کہنا ہے کہ بیشتر اہم معاشی اشاریے شرح سود میں کمی کا اشارہ کررہے، زیادہ تر ماہرین شرح سود میں پچیس بیسس پوائنٹس کی کمی کی پیشگوئی کررہے ہیں۔

ماہرین کے مطابق افراط زر کی شرح میں کمی سب سے اہم وجہ ہے، ادارہ شماریات کی جانب سے بیس ائیر کی تبدیلی کے باعث رواں مالی سال افراط زر کی شرح نو اعشاریہ چھ فیصد رہنے کی توقع ہے، حکومتی بانڈز پر شرح منافع میں کمی بھی شرح سود میں کمی کی نشاندہی کررہی ہے، بیرونی کھاتوں میں نمایاں بہتری آئی ہے، جاری اور تجارتی خسارہ کم ہوا ہے۔

مزید پڑھیں : شرح سود میں ایک‌ فیصد اضافہ

یاد رہے جولائی میں اسٹیٹ بینک نے رواں مالی سال کی پہلی مانیٹری پالیسی کااعلان کرتے ہوئے شرح سود میں ایک فیصد کااضافہ کیا تھا ، جس کے بعد اس وقت بنیادی شرح سود 13.25 فیصد ہے۔

گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر کا کہنا تھا کہ مہنگائی میں اضافےاورروپےکی قدرمیں کمی کےباعث شرح سود میں اضافے کافیصلہ کیاگیا، اس فیصلےمیں گیس اوربجلی کی قیمتوں میں اضافے کوبھی مدنظررکھا گیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں