عمران خان کے وزیراعظم بننے کے بعد ذخائر میں 8 کروڑ 20 لاکھ ڈالر کا اضافہ
The news is by your side.

Advertisement

عمران خان کے وزیراعظم بننے کے بعد ذخائر میں 8 کروڑ 20 لاکھ ڈالر کا اضافہ

کراچی : عمران خان کے وزیراعظم بننے کے بعد ایک ہفتے کے دوران مرکزی بینک کے غیر ملکی ذخائر میں 8 کروڑ 20 لاکھ ڈالر کا اضافہ ہوگیا، جس کے بعد مجموعی زرمبادلہ کے ذخائر 16 ارب 72 کروڑ ڈالر سے تجاوز کرگئے۔

تفصیلات کے مطابق اسٹیٹ بینک کا کہنا ہے کہ ایک ہفتے کے دوران مرکزی بینک کے ذخائر میں 8 کروڑ 20 لاکھ ڈالر کا اضافہ کے بعد ذخائر بڑھ کر 10ارب 23 کروڑ ڈالر سے تجاوز کرگئے۔

اسٹیٹ بینک کی جانب سے جاری اعداد و شمار کے مطابق کمرشل بینکوں کے پاس 6 ارب 49 کروڑ ڈالر کے ذخائر موجود ہیں جبکہ مجموعی زرمبادلہ کے ذخائر 16 ارب 72 کروڑ ڈالر سے تجاوز کرگئے۔

یاد رہے گذشتہ ماہ  کے آخر میں چین نے اعلان کیا تھا پاکستان کے زرمبادلہ ذخائرکو سنبھالہ دینے کے لئے دو ارب ڈالر کا آسان قرضہ دے گا، جس کے بعد وزارت خزانہ نے کہا تھا کہ ایک ارب ڈالر پاکستان کو موصول ہوگئے ہیں۔ْ

ذرائع کے مطابق دو ارب ڈالر میں ایک ارب ڈالر دو اگست تک ملکی خزانے میں نظر آنا شروع ہوجائیں گے، چین کی طرف سے ملنے والے اس رقم کے بعد ملکی زرمبادلہ ذخائر دس ارب ڈالر سے تجاوز کر جائیں گے۔

مزید پڑھیں : پاکستان کا مالی خسارہ مزید بڑھےگا، موڈیز

عالمی ریٹنگ ادارے موڈیز نےپاکستان سےمتعلق رپورٹ میں انکشاف کیاکہ پاکستان کا مالی خسارہ مزید بڑھےگا، پاکستان کوبیرونی ادائیگیوں کےدباؤکاسامناہے، پاکستان کورقم کی بہت ضرورت ہے،زرمبادلہ کےذخائرمیں مزید کمی ہوسکتی ہے،تاہم اس میں اضافہ آئی ایم ایف ودیگرذرائع سےممکن ہے۔

رپورٹ میں کہا گیا تھا کہ درآمدی اشیاء کی مانگ میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے،سی پیک کےباعث درآمدات میں اضافہ ہورہا ہے،جاری کھاتوں کاخسارہ جی ڈی پی کے4 اعشاریہ 8 فیصد رہنے کا امکان ہے۔ زرمبادلہ کےذخائربیرونی ادائیگیوں کےلئےاس وقت کافی ہیں۔

یاد رہے چند روز قبل پی ٹی آئی رہنما اسد عمر نے غیرملکی خبررساں ادارے کو انٹرویو میں کہا تھا کہ پاکستان زرمبادلہ کے ذخائر کو بڑھانے کے لیے عالمی مالیاتی فنڈ سمیت دوست ممالک کے پاس جا سکتا ہے۔

واضح رہے وزیراعظم عمران خان نے قوم سے اپنے پہلے خطاب میں کہا تھا کہ پاکستان مقروض قوم بن چکا ہے ، ہمیں بیرون ممالک سے قرضہ لینے کی بری عادت ہوچکی ہے، قرضوں کے ساتھ کوئی بھی ملک ترقی کا سفر طے نہیں کرسکتا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں